مولوی فقیر کی حوالگی کیلئے پاکستانی درخواست مسترد، انٹرپول سے رابطہ کریں گے : رحمان ملک

مولوی فقیر کی حوالگی کیلئے پاکستانی درخواست مسترد، انٹرپول سے رابطہ کریں گے ...
 مولوی فقیر کی حوالگی کیلئے پاکستانی درخواست مسترد، انٹرپول سے رابطہ کریں گے : رحمان ملک

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

کابل، اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) افغانستان نے کالعدم تحریک طالبان پاکستان کے رہنما مولوی فقیر کی حوالگی کی پاکستانی درخواست مسترد کردی جبکہ وفاقی وزیرداخلہ رحمان ملک کاکہناہے کہ مولوی فقیر کی حوالگی کیلئے ہفتہ کو انٹر پول سے رابطہ کریں گے۔بھارتی میڈیا کے مطابق افغان وزارت خا رجہ کے ترجمان موسیٰ زئی نے کہاکہ مولوی فقیر سے ابھی تفتیش جاری ہے اور اُنہیں پاکستان کے حوالے نہیں کیا جا سکتا اور نہ ہی دونوں ملکوں کے درمیان قیدیوں کے تبادلے کا کوئی معاہدہ ہے۔اُنہوں نے کہاکہ لندن میں ہونے والی سہہ فریقی کانفرنس میں افغانستان نے پاکستان سے افغان قیدیوں کی حوالگی کا مطالبہ کیا تھا جو پاکستان نے مسترد کردیا تھا۔دوسری طرف اسلام آباد میں پولیس کی پاسنگ آﺅٹ پریڈ سے خطاب کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وفاقی وزیرداخلہ رحمان ملک نے کہاکہ مولوی فقیر افغانستان کی حراست میں ہے اور اُس کی حوالگی کیلئے آج انٹر پول سے رابطہ کریں گے ۔ رحمان ملک نے کہاکہ مولوی فقیر محمد دہشت گردی کی کئی کارروائیوں میں ملوث ہے اورا ُس کے خلاف پاکستانی قوانین کے مطابق کارروائی کریں گے ۔ایک سوال کے جواب میں اُنہوں نے کہاکہ اُن کے نیچے کوئی ایجنسی کام نہیں کرتی ، اُنہیں ذمہ دار نہ ٹھہرایاجائے ، انٹیلی جنس ایجنسیاں جو معلومات فراہم کرتی ہیں ، صوبوں کو فراہم کردی جاتی ہیں ،گوریلے پکڑے گئے تو امن ہوجائے گا ، طالبان مذاکرات کیلئے سنجیدہ نہیں ۔

مزید : اسلام آباد /Headlines