تعلیم کی بہتری کیلئے کالجوں کو اضافی بجٹ دیں گے،خلیق الرحمان

  تعلیم کی بہتری کیلئے کالجوں کو اضافی بجٹ دیں گے،خلیق الرحمان

  



  

پشاور(سٹاف رپورٹر)وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا کے مشیر برائے اعلیٰ تعلیم خلیق الرحمن نے کہاہے کہ گورنمنٹ پوسٹ گریجویٹ گرلزکالج کی بچیوں کی شاندار تعلیمی کارکردگی دیکھ کریقین آگیا ہے کہ وزیراعظم پاکستان جس نئے ترقی یافتہ اورخوشحال پاکستان کا وژن لے کر کوششیں کررہے ہیں وہ بہت قریب ہے اوراس کے خدوخال صاف نظر آرہے ہیں۔وہ ہفتے کے روزمذکورہ کالج میں سالانہ تقسیم انعامات کی تقریب سے خطاب کررہے تھے۔ اس موقع پر مشیر سائنس وٹیکنالوجی ضیاء اللہ بنگش،ایڈیشنل ڈائریکٹر اعلیٰ تعلیم مسزصبیحہ زیب،کالج پرنسپل پروفیسر جمیلہ خانم، جی پی جی سی کوہاٹ کے پرنسپل ظفر اللہ خان وزیر،ہنگو اورلاچی کی گرلز کالجز کی پرنسپلز، کالج ٹیچرز اورطالبات کی کثیر تعداد بھی موجود تھی۔ انہوں نے کہا کہ ہمارا صوبہ تعلیمی ترقی میں گذشتہ سات سال کی کوششوں کے نتیجے میں بہت آگے نکل چکاہے۔تاہم اب معیار تعلیم بہتر بنانے پرخصوصی توجہ دی جارہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ خواتین کی تعلیم شہروں کی یونیورسٹیوں میں پچاس فیصد کے قریب ہے یہاں تک کہ زرعی یونیورسٹی میں بھی خواتین کی شرح یہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ پوسٹ گریجویٹ گرلز کالج کی ترقی کی مثال صوبہ کے دوسرے کالجوں کے سامنے بھی پیش کریں گے۔انہوں نے کہا کہ مستقبل میں کوہاٹ سے اچھی اچھی سائنسدان ملک کی خدمت کیلئے نکلیں گی۔صوبائی مشیرنے کہا کہ گذشتہ عشرہ کے دوران کوہاٹ کے اردگرد امن وامان کے جو حالات تھے،اس کالج نے بہت کم عرصہ میں بد امنی کے اثرات سے نکل کر ترقی کی شاہراہ پراہم سفر کاآغاز کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ تعلیم کی بہترین کارکردگی دکھانے والے کالجوں کواضافی بجٹ دیں گے تاکہ وہ دوسروں کیلئے مزید بہتر مثال قائم کرسکیں گے۔ اس موقع پر ضیاء اللہ بنگش نے اپنے خطاب میں کہا کہ بورڈ اوریونیورسٹی سطح پر جو بھی کارکردگی تقریب ہوتی ہے اس میں گرلز پوسٹ گریجویٹ کالج کوہاٹ کے انعامات ہی انعامات ہوتے ہیں۔ انہوں نے اعلان کیا کہ بچیاں سائنس اورآرٹس میں بہترین آئیڈیاز لائیں،صوبائی حکومت ان کے ماڈلز کو عملی جامہ پہنانے کیلئے فنڈز اورسامان فراہم کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ بہترین طالبات کو قومی اوربین الاقوامی سطح پراپنی صلاحیتوں کامظاہرہ کرنے کے مواقع فراہم کریں گے۔ مشیر سائنس وٹیکنالوجی نے اعلان کیا کہ کوہاٹ میں وومن کمپلیکس بنارہے ہیں جس میں دکاندار اورگاہک صرف خواتین ہوں گی۔ ضیاء اللہ بنگش نے کالج کی ہونہار طالبات سے کہا کہ وہ خواتین اور بچوں کے پارک میں سائنسی وجغرافیائی ماڈلزبڑے بڑے سائزوں میں بنانے کیلئے انہیں فنڈز اورسامان فراہم کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ بچیوں کی قابلیت،محنت اورلگن دیکھ کرپاکستان کاروشن مستقبل صاف نظر آرہا ہے۔ مشیر سائنس وٹیکنالوجی نے بچیوں کو تاکید کی کہ وہ کلین اینڈ گرین پاکستان کیلئے اپنے اپنے نام پر ایک ایک پودا لگائیں اور ان کی دیکھ بال کویقینی بنائیں۔ قبل ازیں مہمان اورمیزبان مشیر نے کالج میں پودے لگائے،سائنسی،جغرافیائی اورآرٹس ماڈلز بنانے والی بچیوں سے فرداً فرداً سوالات کئے جن کے انہوں نے متاثر کن تیاری کے ساتھ جوابات دیئے۔ بعدازاں سال 2019 کیلئے کالج کی طالبات،استانیوں اورملازمین میں نصابی،ہم نصابی، کارکردگی،سپورٹس اوردیگر شعبوں میں نمایاں مقام حاصل کرنے پر ٹرافیاں اورسرٹیفیکٹ تقسیم کئے۔ تقریب میں پرنسپل جمیلہ خانم نے کالج کی سالانہ سرگرمیوں کی تفصیلی رپورٹ پیش کی۔ تقریب کے بعد خلیق الرحمن اورضیاء اللہ بنگش نے کے ڈی اے گرلز ڈگری کالج میں سائنسی،جغرافیائی اورآرٹس نمائش کامعائنہ کیا اوربچیوں کی کارکردگی پران کوزبردست شاباش دی۔مشیر سائنس وٹیکنالوجی نے یہاں بھی طالبات کو خواتین وبچوں کے پارک میں بڑے بڑے ماڈلز بنانے کیلئے وسائل فراہم کرنے کا اعلان کیا اورتاکید کی کہ ان قابل بچیوں کی جانب سے دوسری کلاسوں کی بچیوں کوبھی مستفید کرنے کیلئے سیشنز کا اہتمام کیاجائے۔دونوں مشیروں نے کالج کے معیار کی زبردست تعریف کی۔

مزید : پشاورصفحہ آخر