شہبازتتلہ کیس، آلات قتل دراصل کیا بہانہ کرکے منگوائے گئے تھے؟ تہلکہ خیز دعویٰ

شہبازتتلہ کیس، آلات قتل دراصل کیا بہانہ کرکے منگوائے گئے تھے؟ تہلکہ خیز ...
شہبازتتلہ کیس، آلات قتل دراصل کیا بہانہ کرکے منگوائے گئے تھے؟ تہلکہ خیز دعویٰ

  



لاہور (ویب ڈیسک)ایڈووکیٹ شہباز تتلہ کے قتل میں ملوث ایس ایس پی مفخرعدیل کی کہانی میں ایک اور نیا موڑ آگیا۔ پولیس حراست میں اسد بھٹی اور مفرور ایس ایس پی مفخرعدیل کے دوستوں نے نیا انکشاف کیاہے۔

روزنامہ جنگ کے مطابق تفتیش میں انکشاف میں کیا گیا ہے کہ تیزاب اور قتل کے دیگر آلات ڈرامہ شوٹ کرنے کا کہہ کرمنگوائے گئے تھے،مفخر عدیل نے ڈرامہ لکھا، شوٹ کے لئے تیزاب منگوایا، تیزاب لانے کی ذمہ داری اہلیہ کے ملازم عرفان کی تھی۔عرفان قسطوں میں تیزاب کی گیلن لاتا رہا،دھول اڑانے کے لئے مٹی بھی ڈرامہ شوٹ کے لئے منگوائی گئی۔ پولیس حکام کا کہنا ہے کہ مفخر عدیل نے 3 بار لوکیشن بدلی۔

واضح رہے کہ پولیس کو دورانِ حراست بیان میں اسد بھٹی نے بھی اہم انکشافات کئے تھے،اپنے بیان میں اسد بھٹی نے بتایا کہ شہبازتتلہ کو مفخرعدیل نے7فروری کوشراب میں گولیاں ملاکردیں،مفخرعدیل نے تکیہ شہباز تتلہ کے منہ پر رکھا جس سےاس کاسانس بندہوگیا ،تولاش کے ٹکڑے ٹکرے کر کے تیزاب سے بھرےڈرم میں رکھے گئے،بعدازاںبڑے ڈرم سے مواد2چھوٹے ڑرموں میں ڈال کرجیپ میں رکھاگیا اوریہ ڈرم گندے نالے میں بہادئیے گئے۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور