گندم کی اگیتی کاشتہ فصل کی بہتر کاشت کیلئے ہدایات

  گندم کی اگیتی کاشتہ فصل کی بہتر کاشت کیلئے ہدایات

  

 لاہور(سٹی رپورٹر) ترجمان محکمہ زراعت پنجاب نے بتایا ہے کہ گندم کی اگیتی کاشتہ فصل کو دوسرا پانی 80تا 90اور پچھیتی کاشتہ فصل کودوسرا پانی 70تا80دن بوائی کے بعد گوبھ کے وقت لگائیں اس وقت سٹہ پودے کے اندر بن کر باہر نکلنے کے مراحل میں ہوتا ہے اگر اس مرحلے میں پانی نہ دیا جائے یا تاخیر سے دیا جائے تو سٹے چھوٹے رہ جاتے ہیں۔ جبکہ تیسرا پانی اگیتی کاشتہ گندم کو 125تا130اورپچھیتی کاشتہ گندم کو 110تا115دن بوائی کے بعد دانے کی دودھیا حالت کے وقت لگائیں۔جبکہ خشک موسم کی صورت میں ایک اضافی پانی دوسرے اور تیسرے پانی کے درمیان لگائیں۔ترجمان نے مزید بتایا کہ کاشتکار گندم کی فصل پر کنگی کاحملہ پر نظر رکھیں۔کنگی کا مرض پھپھوندی کی وجہ سے پیدا ہوتا ہے۔زرد کنگی کا حملہ پتّوں پر ہوتا ہے اور انتہائی شدید حملہ کی صورت میں سٹّے بھی متاثر ہوتے ہیں۔پودے کے پتوں پر زرد رنگ کے چھوٹے چھوٹے دھبے متوازی قطاروں میں پوڈر کی صورت پائے جاتے ہیں۔بھوری کنگی کا حملہ عام طور پر نچلے پتوں سے شروع ہوتا ہے جس کی وجہ سے پتے کے اوپربھورے رنگ کا زنگ نما پوڈر دکھائی دیتا ہے۔

 جبکہ سیاہ کنگی کا حملہ میں پتوں اور تنوں پر بیضوی دھبے نمودار ہوتے ہیں جو کہ شروع میں بھورے رنگ کے ہوتے ہیں اور بعد ازاں ان کا رنگ سیاہ ہو جاتا ہے اور سائز میں بڑے ہو جاتے ہیں۔یاد رہے کنگی کا حملہ سب سے پہلے کھیت میں ٹکڑیوں کی صورت میں ظاہر ہوتا ہے اور پھر پورے کھیت میں پھیل جاتی ہے لہذٰا کاشتکار باقاعدگی سے اپنی فصل کا معائنہ کریں اور کنگی کا حملہ ظاہر ہوتے ہی مناسب پھپھوندی کْش زہر وں کا  محکمہ زراعت کے مقامی عملے کے مشورہ سے سپرے کریں تاکہ یہ بیماری مزید نہ پھیلے۔

مزید :

کامرس -