سنٹرل جیل کراچی میں قیدیوں   کا حلیم عادل شیخ پرمبینہ تشدد 

     سنٹرل جیل کراچی میں قیدیوں   کا حلیم عادل شیخ پرمبینہ تشدد 

  

کراچی(سٹاف رپورٹر)سندھ اسمبلی میں قائد حزب اختلاف اور پی ٹی آئی  کے رہنما حلیم عادل  شیخ نے الزام لگایا ہے کہ قیدیوں نے جیل میں انہیں تشدد کا نشانہ بنایا،جناح اسپتال میں وہیل چیئرمین پر موجود حلیم عادل شیخ نے الزام لگایا کہ 50سے 60قیدیوں نے  ان پر حملہ کیا اور مکوں اور تھپڑوں سے ان کی کمر پر زخم آ ئے ہیں انہوں نے کہا کہ جس پیر پر چوٹیں آئی ہیں  اس میں راڈ ڈلی ہوئی ہے جبکہ جسم کے دیگر اعضا پر بھی چوٹیں آئیں، جیل انتظامیہ مکمل سی سی ٹی وی فوٹیج نہیں دکھا رہی ہے دوسری جانب  وفاقی وزیر پورٹ اینڈ شپنگ علی زیدی  نے کہا ہے کہ حلیم عادل پر جیل میں پیپلز پارٹی کے 50غنڈوں نے حملہ کیا، معاملے کو  وزیراعظم آفس میں اٹھاؤں گا،علی زیدی نے آئی جی سندھ، سیکرٹری داخلہ اور چیف سیکرٹری کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کردیا انہوں نے کہا کہ سندھ اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر حلیم عادل شیخ سے میری  بات ہوئی ہے، حلیم عادل شیخ ہسپتال میں داخل ہیں   ادھر وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید احمد نے حلیم عادل شیخ کے ساتھ ناروا سلوک کا نوٹس لیتے ہوئے چیف سیکرٹری سندھ سے رپورٹ طلب کرلی۔

مبینہ تشدد 

مزید :

صفحہ اول -