راجن پور: ٹھیکوں کی الاٹمنٹ میں بڑے پیمانے پر بے ضابطگیوں کا انکشاف

راجن پور: ٹھیکوں کی الاٹمنٹ میں بڑے پیمانے پر بے ضابطگیوں کا انکشاف

  

راجن پور (ڈسٹر کٹ رپورٹر) راجن پور میں ترقیاتی کاموں کے ٹھیکوں کی الاٹمنٹ میں بڑے پیمانے پر بے ضابطگیوں کاانکشاف ہوا ہے، تفصیلات کے مطابق دس (بقیہ نمبر48صفحہ 7پر)

سال قبل ترقیاتی کا موں کی الاٹمنٹ کے حوالے سے حکو مت پنجاب نے قواعد وضع کئے جن میں ایک کے تحت ترقیاتی کا موں کی الاٹمنٹ کے ٹینڈرز کی کاپیاں تعمیراتی محکموں ہائی وے، بلڈنگز، پبلک ہیلتھ انجینئر نگ،لوکل گور نمنٹ کے علاوہ متعلقہ ضلع کے ڈپٹی کمشنر آفس، تحصیلوں کے اسسٹنٹ کمشنرز کے پاس بھی موجود رہیں گی جہاں سے ٹھیکیدار یہ ٹینڈرفارم قیمتاً خرید کرکے ٹینڈرز پر نرخ دَرج کرکے محکمہ کے پاس جمع کراسکتا ہے سابقہ حکو مت پنجاب کے دَور میں ان قواعد پر عمل کیا جاتا رہا مگر گذشتہ 2 سالوں سے ان قواعد کوپس پشت ڈال کر من پسند منظور نظر کنٹریکٹرز کوٹینڈرز جاری کرکے باقی ٹھیکیدارو ں کوٹال دیا جاتا ہے ایسا کرکے ایگزیکٹو انجینئرز ہائی وے، بلڈنگز، تحصیل کونسل، پبلک ہیلتھ انجینئر نگ اور لوکل گور نمنٹ سرکاری خزا نے کوناقابل تلافی نقصان پہنچا رہے ہیں جبکہ آفیسران اور ایسے ٹھیکیداروں کے گٹھ جوڑ سے تعمیراتی منصو بوں میں ناقص کوآلٹی کا میٹرئیل بھی استعمال کرکے منصو بہ جات کی پائیداری بھی مشکوک ہورہی ہے عوامی وشہری حلقوں نے وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان خان بزدار سے نوٹس لینے اورایسے آفیسران کے خلاف کاروائی کا مطا لبہ کیا ہے۔ 

انکشاف

مزید :

ملتان صفحہ آخر -