این اے 75 ڈسکہ ضمنی الیکشن، الیکشن دوبارہ ہونگے یا نہیں؟ ریٹرننگ آفیسر نے رپورٹ الیکشن کمیشن کو بھجوادی

این اے 75 ڈسکہ ضمنی الیکشن، الیکشن دوبارہ ہونگے یا نہیں؟ ریٹرننگ آفیسر نے ...
این اے 75 ڈسکہ ضمنی الیکشن، الیکشن دوبارہ ہونگے یا نہیں؟ ریٹرننگ آفیسر نے رپورٹ الیکشن کمیشن کو بھجوادی

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن ) قومی اسمبلی کے حلقہ 75 ڈسکہ میں ضمنی الیکشن  کے حوالے سے ریٹرننگ آفیسر  نے رپورٹ الیکشن کمیشن کو بھجواتے ہوئے تجویز دی ہے کہ 14 پولنگ سٹیشنز پر پولنگ دوبارہ کروائی جائے۔

ایکسپریس  نیوز کے مطابق ڈسکہ میں ہونے والے ضمنی انتخابات میں مبینہ دھاندلی کی شکایت پر الیکشن کمیشن نے اس حلقہ کا رزلٹ اناؤنس نہیں کیا تھا اور ریٹرننگ آفیسر کو تحقیقات کا حکم دیا تھا۔تحقیقات مکمل ہونے کے بعد ریٹرننگ آفیسر کی جانب سے رپورٹ الیکشن کمیشن کو بھجوائی گئی ہے جس میں کہا گیا ہے کہ  23 پولنگ سٹیشنز کے نتائج میں تاخیر پر پاکستان  مسلم لیگ ن کی امیدوار نوشین افتخار نے درخواست دی تھی کہ  ان پولنگ سٹیشنز کے نتائج کو حتمی نتائج میں شامل نہ کیا جائے۔لیگی امیدوار نے  ان 23 پولنگ سٹیشنز  میں سے  18 پولنگ سٹیشنز کے فارم 45 بھجوائے گئے۔فارم 45 کا تفصیلی جائزہ لینے پر ن لیگی امیدوار کے خدشات کی تصدیق ہوئی تاہم پاکستان تحریک انصاف(پی ٹی آئی )کے  امیدوار نے پریزائیڈنگ آفیسرز کے فارم 45 پر اظہار اطمینان کرتے ہوئے نتائج جاری کرنے کا مطالبہ کیا۔

صوبائی الیکشن کمشنر کی ہدایات پر 20 پولنگ اسٹیشنز کے پریزائیڈنگ افسران کا بھی بیان ریکارڈ کیا گیا جس میں انکا کہنا تھا کہ رات ساڑھے 10 بجے تک ووٹوں کی گنتی کا عمل مکمل ہوا اور دھند کے باعث ان کو پہنچنے میں تاخیر ہوئی، جبکہ موبائل فون کی بیٹری ختم ہونے کے باعث وہ کئی گھنٹے سے رابطہ نہیں کر سکے۔ بادی النظر میں 14 پولنگ سٹیشنز پر پریزائیڈنگ افسران نے نتائج میں ردوبدل کیا، لہذا شفافیت کو مدنظر رکھتے ہوئے الیکشن کمیشن این اے 75 کے 14 پولنگ اسٹیشنز میں دوبارہ الیکشن کرائے اور تب تک الیکشن کمیشن این اے 75 کے نتائج کا اعلان نہ کرے۔

مزید :

قومی -