امریکی شہریت کے خواہش مندوں کی بڑی مشکل حل، صدر جوبائیڈن نے خوشخبری سنادی

 امریکی شہریت کے خواہش مندوں کی بڑی مشکل حل، صدر جوبائیڈن نے خوشخبری سنادی
 امریکی شہریت کے خواہش مندوں کی بڑی مشکل حل، صدر جوبائیڈن نے خوشخبری سنادی

  

واشنگٹن(مانیٹرنگ ڈیسک) سابق امریکی صدر ڈونلڈٹرمپ نے سٹیزن شپ ٹیسٹ کو انتہائی سخت بنا کر لوگوں کے لیے امریکی شہریت حاصل کرنا بہت مشکل کر دیا تھا تاہم صدر جوبائیڈن نے اب ان کا یہ ٹیسٹ ورژن ردی کی ٹوکری میں پھینک کر امریکی شہریت کے خواہش مندوں کے لیے دوبارہ آسانی کر دی ہے۔ میل آن لائن کے مطابق امریکی سٹیزن شپ اینڈ امیگریشن سروسز کی طرف سے ایک پالیسی میمو ارسال کیا گیا ہے جس میںبتایا گیا ہے کہ سابق صدر ٹرمپ نے 2020ءمیں جس سٹیزن شپ ٹیسٹ منظوری دی تھی، وہ 19اپریل 2021ءسے منسوخ ہو جائے گا۔ 

یہ ٹیسٹ منسوخ ہونے کے بعد کچھ عرصے تک درخواست دہندگان اپنی مرضی سے 2020ءیا 2008ءکے ٹیسٹ ورژن میں سے کسی ایک کا انتخاب کر سکیں گے۔ واضح رہے کہ 2008ءکے ٹیسٹ ورژن میں 10سوالات ہوتے تھے جن میں سے پاس ہونے کے لے درخواست دہندگان کو 6سوالات کے درست جوابات دینے ہوتے تھے۔ تاہم صدر ٹرمپ نے 2020ءمیں جس ٹیسٹ کی منظوری دی اس میں سوالات کی تعداد20کر دی گئی تھی اور ان میں سے پاس ہونے کے لیے 12کے درست جوابات ہونا ضروری قرار دیئے گئے تھے۔

مزید :

بین الاقوامی -