نوجوان لڑکی نے خودکشی کرلی لیکن مرنے سے پہلے چھوڑے گئے خط میں ایسی بات بتادی کہ کسی کا بھی دل پسیج جائے

نوجوان لڑکی نے خودکشی کرلی لیکن مرنے سے پہلے چھوڑے گئے خط میں ایسی بات بتادی ...
نوجوان لڑکی نے خودکشی کرلی لیکن مرنے سے پہلے چھوڑے گئے خط میں ایسی بات بتادی کہ کسی کا بھی دل پسیج جائے

  

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) بھارتی ریاست گجرات میں ایک لڑکی نے خودکشی کرکے موت کو گلے لگا لیا اور مرنے سے پہلے 18صفحات پر مبنی ایک خط میں خودکشی کی ایسی وجوہات لکھیں کہ اس کے سسرالیوں کوپولیس نے اٹھا کر حوالات میں ڈال دیا۔ انڈیا ٹائمز کے مطابق اس لڑکی کا نام ہرشا پٹیل تھا جس کی 2020ءمیں ڈاکٹر ہتندر پٹیل کے ساتھ شادی ہوئی تھی۔ ڈاکٹر ہتندر احمد آباد کے دیوام آرتھوپیڈک ہسپتال میں ملازمت کرتا ہے۔ 

ہرشا پٹیل نے خط میں یہ شرمناک انکشاف کیا کہ اس کے شوہر نے اس کے ساتھ شادی محض ’سیکشوئل فیورز‘کے لیے کی تھی۔ وہ اور اس کے ماں باپ ہرشا کو جہیز کم لانے پر تشدد کا نشانہ بھی بناتے تھے۔ ہرشا نے خط میں لکھا کہ ایک بار ہتندر کی ماں نے اسے دھکا دے کر سیڑھیوں سے نیچے بھی گرا دیا تھا۔ رپورٹ کے مطابق ہرشا نے زہر پی کر خودکشی کی۔ ہرشا کے والد کی مدعیت میں پولیس نے اس کے شوہر اور ساس سسر کو گرفتار کرکے ان کے خلاف مقدمہ درج کر لیا ہے۔ 

مزید :

ڈیلی بائیٹس -