فلسطینی نوجوان کا بس پر حملہ کر کے دو درجن سے زائد یہودیوں کو زخمی کرنا جراتمندانہ اقدام ہے،حماس

فلسطینی نوجوان کا بس پر حملہ کر کے دو درجن سے زائد یہودیوں کو زخمی کرنا ...

مغربی کنارا (این این آئی)حماس نے مقبوضہ فلسطینی شہر تل الربیع میں یہودی آباد کاروں کی بس میں خنجر کے وار سے دو درجن یہودیوں کو زخمی کئے جانے کے واقعے کو جراتمندانہ کارروائی قرار دیا ہے ۔حماس ترجمان حسام بدران نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ تل ابیب میں بس پر حملہ فلسطینیوں کی صہیونی مظالم کیخلاف انفرادی مزاحمت کی بہترین مثال ہے۔

اس طرح کے واقعات صہیونی فوج کی فلسطینیوں کیخلاف منظم ریاستی دہشت گردی کا فطری رد عمل ہیں۔ترجمان نے کہا کہ تل ابیب کارروائی سے فلسطینی شہداء کی ماؤں کے دلوں میں سکون آگیا، حماس اس جہادی اور بہادرانہ کارروائی کی تعریف کرتی ہے۔ یہ کارروائی فلسطینیوں کیخلاف اسرائیلی فوج کے مظالم کا رد عمل ہے۔انہوں نے کہا کہ تل ابیب کارروائی سے اسرائیلی دشمن کیساتھ مفاہمت اور مذاکرات کرنے والے تمام حلقوں کو یہ پیغام پہنچا ہے کہ فلسطینی عوام دشمن سے مذاکرات پر یقین نہیں رکھتے ہیں۔ اسرائیلی فوج آئے روز نہتے اور معصوم فلسطینیوں کا قتل عام کرتی ہے اور اس کے جواب میں فلسطینی عوام بھی خاموش تماشائی نہیں بنیں گے۔

مزید : عالمی منظر