ہر سطح پر عوام کو تحفظ فراہم کرنا حکومت کی ذمہ داری ہے،میاں محمد ادریس

ہر سطح پر عوام کو تحفظ فراہم کرنا حکومت کی ذمہ داری ہے،میاں محمد ادریس

کراچی (این این آئی) فیڈریشن آف پاکستان چیمبرز آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر میاں محمد ادریس نے کہا ہے کہ ہر سطح پر عوام کو تحفظ فراہم کرنا حکومت کی ذمہ داری ہے اور سیکیورٹی کمپنیوں کی جانب سے ہر سطح پر ذمہ داریاں بڑھتی جا رہی ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ تاجر برادری اور عوام میں عدم تحفظ کے خوف کے باعث اپنے ذاتی اخراجات پر نجی سیکیورٹی کمپنیوں سے سیکیورٹی گارڈ ز رکھے جاتے ہیں اور حکومت کی جانب سے سیلز ٹیکس عائد کئے جانے سے ان کے اخراجات میں مزید اضافہ ہو جائے گا ۔ لہذا حکومت سیکیورٹی فراہم کرنے والی نجی کمپنیوں کو سیلز ٹیکس سے مستشنیٰ قرار دے ۔ یہ بات انہوں نے میجر ریٹائرڈ منیر احمد ، چیئرمین (APSAA) فیڈریشن ہاﺅس کے دورے کے موقع پر کہی ۔اس موقع پر ایف پی سی سی آئی کے سینئر نائب صدر رحیم جانو ، نائب صدور میں شہانواز اشتیاق ، محمد وسیم وہرہ ، دارو خان اور سیکرٹری جنرل ایم ۔ اے لودھی بھی موجود تھے ۔میاں ادریس صدر ایف پی سی سی آئی نے کہا کہ پشاور آرمی پبلک سکول سانحہ کے بعد پنجاب اور کے پی کے کے ساتھ دیگر صوبوں کے ا سکولوں کو دھمکی ملنے کے بعد عوام میں اپنے بچوں کے تحفظ کے لئے تحفظات بڑھتے جارہے ہیں اور عوام کی کوشش ہوتی ہے کہ ان کے بچوں کو تعلیم سے آراستہ کیاجائے جس کے لئے نجی سکیورٹی کمپنیوں کی خدمات بھی حاصل کر رہے ہیں جس سے والدین کے تعلیمی اخراجات میں مزید اضافہ ہوتا جا رہا ہے ۔

انہوں نے مزید کہا کہ حکومت کی جانب سے کوئی بھی ٹیکس نجی کمپنیوں پر عائد کیا گیا ان ٹیکسوں کا بوجھ عوام پر منتقل ہو گا ۔ میاں ادریس ایف پی سی سی آئی کے صدر نے وزیر اعظم نواز شریف ، تمام صوبوں کے وزیر اعلی اور ایف بی آر سمیت صوبائی ریونیو بورڈ سے اپیل کی ہے کہ وہ ہنگامی بنیادوں پر نجی کمپنیوں پر عائد کئے جانے والے سیلز ٹیکس کو واپس لے لیں ۔اس موقع پر ایف پی سی سی آئی کے سینئر نائب صدر اور نائب صدور نے کہا کہ سکیورٹیز کمپنیاں اپنے سیکورٹی گارڈ ز کی ملازمت کے لئے (APSAA) جو کہ متعلقہ باڈی ہے اس کی شرائط اور اسٹینڈرڈ کو مدنظر رکھتے ہوئے محافظوں کو ملازمت پر رکھیں تاکہ سیکورٹی پر معمور اہلکاروں کا مربوط ڈیٹا تیار کیا جائے ۔اس موقع پر میجر ریٹائرڈ منیر احمد ، چیئرمین (APSAA)سیکورٹی کمپنیوں کو لائحق مختلف معاملات پر روشنی ڈالتے ہوئے کہاکہ نجی سیکورٹی کمپنیوں پر سیلز ٹیکس عائد کیے جانے سے ان پر بوجھ بڑھ جائے گا جو کہ عوام کےلئے بھی قابل قبول نہیں ہوگا ۔ انہوںنے کہا کہ سیلز ٹیکس کمپنیاں انوائس پر چارج کیا جا رہاہے جو کمپنی کی نیٹ انکم ہو تی ہے ۔

مزید : کامرس