گندم کی بھر پور پیداوار حاصل کرنے کے لےے جڑی بوٹیوں کی تلفی بہت ضروری ہے، ڈاکٹر عامر رسول

گندم کی بھر پور پیداوار حاصل کرنے کے لےے جڑی بوٹیوں کی تلفی بہت ضروری ہے، ...

فیصل آباد( آن لائن ) ڈاکٹر عامر رسول اسسٹنٹ ڈائریکٹر پیسٹ وارننگ فیصل آباد نے کہاہے کہ گندم کی بھر پور پیداوار حاصل کرنے کے ے جڑی بوٹیوں کی تلفی بہت ضروری ہے اورجڑی بوٹیوں کی وجہ سے گندم کی 14 سے 42فیصد پیداوار متاثرہوتی ہے۔حکومت پنجاب نے گندم کی فصل میںجڑی بوٹیوں کی تلفی کےلئے محکمہ زراعت توسیع وپیسٹ وارننگ آفیسران کو پنجاب کے تمام اضلاع میں بھر پور مہم چلانے کی ہدایت کی ہے ۔زرعی آفیسران گندم کے کھیت میں اگنے والی چوڑے اور نوکیلے پتوں والی جڑی بوٹیوں کی شناخت کے لیے کاشتکاروں کو رہنمائی فراہم کریں۔ڈاکٹر عامر رسول نے کاشتکاروں کو سفارش کی ہے کہ وہ حالیہ بارشوں کے بعد موسم صاف ہونے پر جڑی بوٹیوں کی تلفی کے لیے کیمیائی زہروں کا استعمال کریں۔

نوکیلے پتوں والی جڑی بوٹیوں کی تلفی کے لیے پینکسا ڈین بحساب 330ملی لیٹر ، چوڑے پتوں والی جڑی بوٹیوں کی تلفی کے لیے فلیورو کسیپر+ایم سی پی اے بحساب 300ملی لیٹر یا ٹرائی سلفیوران بحساب 16گرام اور دونوں قسم کی جڑی بوٹیوں کی تلفی کے لیے میزوسلفیوران +آئیوڈوسلفیوران بحساب 300سو گرام فی 100لیٹر پانی میں ملا کرسپرے کریں۔سپرے وتر حالت میں کریں اور سپرے سے پہلے اپنی مشینوں کی کیلی بریشن کریں اور صحیح نوزلز کا انتخاب کریں۔ انہوں نے بتایا کہ جڑی بوٹیوں کو تلف کرنے کے لےے زہرپاشی کے لیے فلیٹ فین نوزل استعمال کریں۔ ان نوزلز کو جڑی بوٹیوں یا زمین سے ایک سے دو فٹ تک اونچا رکھنے سے محلول کی تقسیم بہتر ہوتی ہے۔

مزید : کامرس