پی پی160: 25ہزار بوگس ووٹ، 71پولنگ اسٹیشنز کا ریکارڈ غائب ، رپورٹ میں انکشاف

پی پی160: 25ہزار بوگس ووٹ، 71پولنگ اسٹیشنز کا ریکارڈ غائب ، رپورٹ میں انکشاف

لاہور(نامہ نگار)الیکشن ٹربیونل نے صوبائی اسمبلی کے حلقہ پی پی 160کے انتخابی ریکارڈ اور ووٹوں کی جانچ پڑتال کی رپورٹ جاری کر دی ہے،رپورٹ میں 25ہزار بوگس ووٹوں کا انکشاف کیا گیا ہے،لاہور کے صوبائی حلقے پی پی 160سے تحریک انصاف کے ظہیر عباس کھوکھر نے مسلم لیگ (ن )کے سیف الملوک کھوکھر کے خلاف انتخابی عذرداری دائر کر رکھی تھی،لوکل کمیشن منیر اے مغل نے 965صفحات اور 3 جلدوں پر مشتمل رپورٹ مرتب کرکے الیکشن ٹربیونل لاہور میں جمع کروائی تھی۔الیکشن ٹربیونل کی جاری کردہ رپورٹ میں 25ہزار بوگس ووٹوں کے ساتھ ساتھ 71پولنگ اسٹیشنز کا ریکارڈ ریٹرننگ افسر کے پاس موجود نہ ہونے کا بھی انکشاف کیا گیا ہے۔دریں اثناء محمد کاظم ملک پر مشتمل الیکشن ٹربیونل نے ا س بات کی تصدیق کی ہے کہ قومی اسمبلی کے حلقہ این اے122کے پولنگ ریکارڈ پر مشتمل تھیلوں میں فارم14اور 15موجود نہیں تھے ۔ ٹربیونل کو ریٹرنگ آفیسر کی جانب سے جو ریکارڈ فراہم کیا گیا تھا اس میں اصل فارم14اور 15 کی بجائے ان کی مصدقہ نقول ہیں۔ ٹربیونل کو فراہم کئے گئے تھیلوں میں مذکورہ فارم موجود نہیں اور نہ ہی ان کے بارے میں کچھ معلوم ہو رہا ہے ۔ الیکشن ٹربیونل کے روبرو پاکستان تحریک انصاف کے چیئر مین عمران خان کی انتخابی عذر داری زیر سماعت ہے۔ الیکشن ٹربیونل نے این اے122کے پولنگ ریکارڈ کی جانچ پڑتال کے لئے ایک کمیشن مقرر کیا تھا جس نے گزشتہ ہفتے اپنی رپورٹ ٹربیونل کو پیش کر دی تھی ۔ اس رپورٹ میں بھی اس بات کا ذکرکیا گیا تھا پولنگ ریکارڈ میں فارم14اور 15 شامل نہیں ہیں تاہم17جنوری کو متعلقہ حکام کی جانب سے مذکورہ فارم ٹربیونل میں پیش کردئیے گئے تھے جن کے بارے میں ٹربیونل نے کہاہے کہ یہ اصل فارم نہیں بلکہ ان کی مصدقہ نقول ہیں ۔

مزید : صفحہ اول

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...