موجودہ حکومت دہشت گردی ختم نہیں کرسکتی،سرفراز خان نیازی

موجودہ حکومت دہشت گردی ختم نہیں کرسکتی،سرفراز خان نیازی

لاہور(پ ر)پاکستان تحریک انصاف کے مرکزی رہنما ء سرفرازخان نیازی نے کہا ہے کہ اسلام آباد میں موجودہ حکومت دہشت گردی ختم نہیں کرسکتی ۔دشمن ملک کی مکاری کے باوجودحکمران وہاں سرمایہ کار ی کرنے پرتلے بیٹھے ہیں ۔میاں نوازشریف چارسدہ یونیورسٹی میں ہونیوالی اندوہناک دہشت گردی کی مذمت کرنے سے زیادہ اپنے بھارتی ہم منصب کاقصیدہ پڑھتے رہے۔

حکمرانوں کے رسمی بیانات سے دہشت گردوں کی صحت پرکوئی فرق نہیں پڑتا۔ہم شہداء کے ورثا کوتنہا نہیں چھوڑیں گے۔باچاخان یونیورسٹی میں دہشت گردی ریاست پرحملے کے مترادف ہے۔بھارت کے مقابل بھیگی بلی بننے والے حکمران قیمتی جانوں کے ضیاع کاحساب دیں۔حکمران بزدلی یااقتدارچھوڑدیں،اس طرح دکان نہیں چلتی جس طرح وہ حکومت چلارہے ہیں ۔ہم مزیدجنازے اٹھانے کے متحمل نہیں ہوسکتے ۔دشمن کی آنکھوں میں آنکھیں ڈالنا اوراسے للکارنامصلحت پسندحکمرانوں کے بس کی بات نہیں ہے۔وہ ایک اجلا س سے خطاب کررہے تھے۔ سرفرازخان نیازی نے مزید کہا کہ ایڈ میں حکومت جبکہ ٹریڈ میں ریاست اورعوام کا فائدہ ہے۔ حکومت کی داخلی ،خارجی اورمعاشی پالیسیاں پاکستان کی سا لمیت اورقومی حمیت کیلئے زہرقاتل ہیں ۔انہوں نے کہا کہ کشکول بردار حکومت اپنے ساتھ ساتھ اٹھارہ کروڑپاکستانیوں کوبھی بھکاری بنانے کے درپے ہے،حکمران اپنے گلے سے غلامی کاطوق اتارے بغیر بیرونی دباؤکامقابلہ اورپاکستان کے قومی مفادات کی حفاظت نہیں کرسکتے ۔ مسلم لیگ (ن) کی قیادت نے وفاق اورپنجاب میں حکومت بنانے کے بعداپنے انتخابی وعدے فراموش کردیے،پی ٹی آئی حکمرانوں کوجھنجوڑتی رہے گی ۔پنجاب حکومت کی نااہلی کے سبب شدت پسندوں کے حملے جاری ہیں۔ انہوں نے کہا کہ حکمرانوں کی منت سماجت کے باوجودبیرونی سرمایہ کارپاکستان آنے کیلئے تیار نہیں ہیں بلکہ توانائی بحران کے سبب مقامی سرمایہ کار بھی اپناکاروباراورسرمایہ بیرون ملک لے جارہے ہیں۔مقامی اوربیرونی سرمایہ کاروں کے اعتماد کی بحالی کیلئے حکمرانوں کوبیرون ملک سے اپناسرمایہ پاکستان میں منتقل کرناہوگا۔انہوں نے کہا کہ باچاخان یونیورسٹی میں خونیں حملے نے پورے ملک میں صف ماتم بچھادی ہے ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1