باچا خان یونیواسٹی پر حملہ حکومت کی غفلت اور لاپرواہی کا نتیجہ ہے ، حیدر ہوتی

باچا خان یونیواسٹی پر حملہ حکومت کی غفلت اور لاپرواہی کا نتیجہ ہے ، حیدر ہوتی

 تخت بھائی (نمائندہ پاکستان ) سابق وزیر اعلیٰ اور عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی صدر حیدر خان ہوتی نے کہا ہے کہ باچا خان یونیورسٹی پر حملہ حکومت کی غفلت اور لاپرواہی کا نتیجہ ہے دھشت گرد ایک سازش کے تحت پختون قوم کو تعلیم کی زیور سے محروم کرنا چاہتے ہیں لیکن ہمارے قوم کی حوصلے بلند ہیں اور ہم اپنی تعلیمی درسگاوں کا اپنی جان سے زیادہ حفاظت کریں گے اور تعلیمی اداروں کو بند نہیں کرنے دیں گے حکومت نیشنل پلان پر فوری عمل کریں اور باچا خان یونیورسٹی پر حملے کی تحقیقات کے لیے جوڈیشل کمیٹی تشکیل دی جائے اور واقعے میں ملوث دھشت گردوں کو بے نقاب کیا جائے اے این پی ان کی پر زور مذمت کرتے ہیں اور ایسے مذموم عزائم سے ہمارے حوصلے پست نہیں کر سکتے اور اخری دم تک پختون قوم کی ترقی اور وحدت کے لیے لڑتے رہیں گے ان خیالات کا اظہار انہوں علاقہ پرخو میں باچا خان یونیورسٹی کے واقعے میں شہید ہونے والے طالب علم شہزاد خان کی والد سے تعزیت کرتے ہوئے کہا اس موقع پر ان کے ہمراہ پارٹی کے جنرل سیکرٹری لطیف الرحمان خان تخت بھائی بار ایسو سی ایشن کے صدر قمر الزمان ایڈوکیٹ ،ضلع کونسل کے رکن جواد ٹکر ،حق نواز خان ایڈوکیٹ ،شیعب خان ایڈوکیٹ اقبال خان ،فرہان ٹکر اور ضلع مردان کے سالار ملک امان خان ، مختیار کھٹانہ ،اور عمران خان بھی موجود تھے انہوں نے کہا کہ معصوم طلباء اور طالبات کو شہید کرنے والوں کا کوئی مذہب نہیں ہوتا بلکہ ان کو انسان کہنا بھی قابل مذمت ہے کوئی بھی مذہب بے گناہ انسانوں کو قتل کرنے کی اجازت نہیں دیتے انہوں نے کہا کہ جہاد افغانستان کے وقت ہمارے اکابرین نے کہا تھا کہ روس اور افغانستان جنگ ہے لیکن کوئی بھی ہماری بات ماننے کے لیے تیار نہیں تھے اج پورے قوم اس کی سزا بھگت رہے ہیں انہوں نے کہا کہ روز اول سے پختون قوم کے خلاف ایک سازش ہو رہی ہے اور ان کی نسل کشی کی جاتی ہیں اور گذشتہ کئی سالوں سے ہمارے ہزاروں جوان بچے شہید کیے گئے انہوں نے کہا کہ اے این پی نے ہر دور میں پختون قوم کی خو شحالی کے لیے قربانی دی ہیں اور دیتے رہیں گے انہوں نے کہا کہ مرکزی اور صوبائی حکومتں امن و امان میں مکمل طور پر ناکام ہو چکے ہیں اور تعلیمی درسگاوں کو سیکورٹی نہ دینا صوبائی حکومت کی منہ بولتا ثبوت ہیں انہوں نے کہا کہ نیشنل پلان پر فوری طور پر عمل درامد کرکے جہاں بھی جہادی تنظمیں ہیں ان کے دفاتروں کو بند کیا جائے اور اپریشن عضب پنجاب میں شروع کریں انہوں نے غمزادہ خاندانوں کے ساتھ دلی ہمدردی کی اور ان کی مغفرت کے لیے دعا کی

مزید : کراچی صفحہ اول