پارا چنار بم دھماکہ وحشیانہ فعل ہے‘ شبیر جدی

پارا چنار بم دھماکہ وحشیانہ فعل ہے‘ شبیر جدی

پاراچنار(نمائندہ خصوصی)پاراچنار کے سیاسی و سماجی رہنماوں نے پاراچنار دھماکے کی شدید مذمت کی ہے اور اسے کرم ایجنسی کے امن کو خراب کرنے کی سازش قرار دیا۔ اپنے الگ الگ بیانات میں مجلس علماء مجلس وحدت المسلین کرم ایجنسی کے جنرل سیکٹری شبیر ساجدی ، امامیہ سٹوڈنٹس آرگنائزیشن کے رہنما اسد مہدی ، وسیم عباس اور سید امجد حسین نے کہا کہ پاراچنار میں ایک بار پھر بے گناہ افراد کے خون سے ہولی کھیلی گئی اور سبزی منڈی میں کام کرنے والیغریب خاندانوں کے کمانے والوں کو خون میں نہلادیا۔ انہوں نے گورنر کے پی کے کی جانب سے ورثا کو تین تین لاکھ روپے دینے کے اعلان پر بھی حیرت کا اظہار کیا اور کہا کہ ملک کے دیگر علاقوں میں دھشت گردی میں شہید ہونے والے افراد کے لواحقین کو دس سے بیس لاکھ روپے دیئے جاتے ہیں گذشتہ ڈیڑھ سال کے دوران کرم ایجنسی سمیت قبائلی علاقوں میں بھی یہ رقم تین لاکھ سے بڑھا کر پانچ لاکھ روپے کردی گئی ہے مگر گورنر خیبر پختون خوا نے رقم مزید بڑھانے کی بجائے کم کردی ہے جس سے قبائل کو شدید دکھ پہنچا ہے۔ انہوں نے معاوضے کی رقم شہد اء کیلئے 20 لاکھ روپے اور زخمیوں کیلئے پانچ پانچ لاکھ روپے دینے کا مطالبہ کیا ، دوسری جانب اہلسنت کمیٹی پاراچنار کے رہنما عطاء اللہ نے پاراچنار دھماکے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہ کہ پاراچنار میں بے گناہ افراد کی شہادت افسوس ناک ہے ہم اس واقعے کی بھر پور مذمت اور خاندانوں سے ہمدردی کا اظہار کرتے ہیں۔

مزید : پشاورصفحہ آخر