کیا ٹوسٹ کو زیادہ سینک کر کھانے سے آپ کینسر کا شکار ہوسکتے ہیں؟ سائنسدانوں نے واضح جواب دے دیا، اگلی مرتبہ کھانے سے قبل ضرور پڑھ لیں

کیا ٹوسٹ کو زیادہ سینک کر کھانے سے آپ کینسر کا شکار ہوسکتے ہیں؟ سائنسدانوں نے ...
کیا ٹوسٹ کو زیادہ سینک کر کھانے سے آپ کینسر کا شکار ہوسکتے ہیں؟ سائنسدانوں نے واضح جواب دے دیا، اگلی مرتبہ کھانے سے قبل ضرور پڑھ لیں

  

لندن (نیوز ڈیسک) ہمارے ہاں دیسی روٹی کو لال کر کے اور بازاری بریڈ کوبراﺅن کر کے کھانا کافی پسند کیا جاتا ہے۔ کچھ لوگ تو اس شوق میں بریڈ کو اتنا گرم کرتے ہیں کہ وہ براﺅن ہونے کی بجائے تقریباً جل جاتی ہے۔ اگرچہ ایسا کرنا زبان کے زائقے کے لئے اچھا ہو سکتا ہے لیکن ہماری صحت کے لئے ہرگز اچھا نہیں۔ ضرورت سے زیادہ سینکے گئے ٹوسٹ وغیرہ کے نقصان دہ ہونے کے بارے میں پہلے بھی کچھ تحقیقات سامنے آئیں، لیکن ایک حالیہ تحقیق میں تو اسے کینسر جیسے موذی مرض کا سبب بھی قرار دے دیا گیا ہے۔

برطانوی نشریاتی ادارے بی بی سی کی رپورٹ کے مطابق ماہرین کا کہنا ہے کہ بریڈ، چپس اور آلو جیسی اشیاءکو بس اتنا ہی سینکنا چاہیے کہ وہ سنہرے ہوجائیں، انہیں براﺅن نہیں کرنا چاہیے۔ اگر آپ انہیں زیادہ سینک کر ان کی رنگت براﺅن یا اس سے بھی گہری کردیتے ہیں تو ان میں ایک ایسے کیمیکل کے پیدا ہونے کا خدشہ ہوتا ہے کہ جو کینسر کا باعث بن سکتا ہے۔

کدوکے بیجوں کا وہ فائدہ جو آپ کو معلوم ہوجائے تو آپ انہیں کبھی بھی نہ پھینکیں

اس کیمیکل کا نام اکرائلا مائڈ ہے اور یہ نشاستے والی غذاﺅں کو بہت زیادہ بھوننے یا تلنے کی صورت میں پید اہوجاتا ہے۔ یاد رہے کہ بریڈ، چپس اور آلو جیسی غذائیں نشاستے سے بھرپور ہوتی ہیں، اور یہی وجہ ہے کہ انہیں زیادہ بھوننے یا تلنے سے ان میں کیمیکل اکرائلا مائڈ پیدا ہونے کا خدشہ بھی زیادہ ہوتا ہے۔

مزید : تعلیم و صحت