ہائی کورٹ :نیشنل ایکشن پلان میں مبینہ طور پررکاوٹ ڈالنے والی این جی او کے خلاف سرکاری نوٹسز معطل

ہائی کورٹ :نیشنل ایکشن پلان میں مبینہ طور پررکاوٹ ڈالنے والی این جی او کے ...
ہائی کورٹ :نیشنل ایکشن پلان میں مبینہ طور پررکاوٹ ڈالنے والی این جی او کے خلاف سرکاری نوٹسز معطل

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہورہائیکورٹ نے نیشنل ایکشن پلان میں مبینہ طور پر رکاوٹ بننے والی این جی او ساﺅتھ ایشیاءپارٹنر شپ کی دفاتر کی بندش کے خلاف دائر درخواست پر ہوم سیکریٹری پنجاب سے جواب طلب کر لیاہے۔

چیف جسٹس سید منصور علی شاہ نے اس سلسلے میں اس این جی او کی طرف سے دائر درخواست پر پولیس کو ہدایت کی ہے کہ درخواست گزار این جی او کو ہراساں نہ کیا جائے ،عدالت نے این جی او کو محکمہ داخلہ پنجاب کی طرف سے بھجوائے گئے نوٹسز پر بھی عمل درآمد روک دیا ہے ۔درخواست گزار کی وکیل عاصمہ جہانگیر نے عدالت کو بتایا کہ پولیس نے نجی این جی او ساوتھ ایشیاءپارٹنر شپ کے دفاتر کو مبینہ طور پر نیشنل ایکشن پلان میں رکاوٹ قرار دیتے ہوئے بند کر دیا۔انہوں نے کہا کہ این جی پر پولیس کی جانب سے لگائے گئے الزام میں کوئی صداقت نہیں نہ ہی اس حوالے سے کوئی ثبوت فراہم کئے گئے۔انہوں نے کہا کہ آئین کے تحت کسی بھی شہری یا تنظیم کی آزادی کو سلب نہیں کیا جا سکتا ،عدالت پولیس کی جانب سے کئے جانے والے غیر قانونی اقدام کو کالعدم قرار دے جس پر عدالت نے ہوم سیکریٹری پنجاب کو 27جنوری کے لئے نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کر لیاہے۔

مزید : لاہور