سخاکوٹ ،مختلف سیاسی پارٹیوں کے 40 افراد پی پی میں شامل

سخاکوٹ ،مختلف سیاسی پارٹیوں کے 40 افراد پی پی میں شامل

سخاکوٹ( نمائندہ پاکستان) تحصیل درگئی میں پی ٹی آئی سمیت دیگر جماعتوں کے چالیس سے زائد آفراد پی پی پی میں شامل ہو گئے ۔ پی ٹی آئی کے اہم رہنماء شاہ روم خان نے پی ٹی آئی کیساتھ ناطہ توڑ کر پیپلز پارٹی میں شمولیت کا اعلان کردیا ۔شمولیت کا انہوں نے اعلان ایک بڑے جلسے کے دوران کیا جس کے مہمان خصوصی چےئرمین ڈیڈک کمیٹی ملاکنڈ اور صوبائی اسمبلی میں پی پی پی کے پارلیمانی لیڈر سید محمد علی شاہ باچہ تھے۔شمولیتی جلسے سے ممبر صوبائی اسمبلی سید محمد علی شاہ باچہ ، سید مولا،سیف اﷲ خان ، آمیر اعظم خان،بشیر خٹک، ضلعی کونسلران حاجی محمد طیب،حاجی اکرم خان،تحصیل کونسلر احسان اللہ اور دیگر نے خطاب کیا۔پی ٹی آئی سے مستعفی ہو کر پی پی پی میں شامل ہونے والوں میں اہم رہنما ء شاہ روم خان ،نوید خان،،امیم خان ،ذیشان خان،فلک ناز،انعام اللہ،اورنگزیب،فہد خان،ریدار خان،گوہر علی،نوشیروان،بخت زمین،گل فراز،تنویر،شوال خان،شہاب خان،رحمان اللہ،شاہ زمان،گل ولی،سعد،عمر خان،اصف خان،عادل خان،جان شیر ،عبدالباسط، ریدی گل،اعجاز خان،واحد، محمد زادہ،ایاز خان،انور خان،فرہاد علی،ثنا ء اللہ،عمر رحمان،شاہ زمان،مجاہد گل،حیدر زمان اور دولت خان وغیرہ شامل ہیں۔ اپنے خطاب میں ایم پی اے سید محمد علی شاہ نے کہا کہ اسلام کے نام پر ایک بار پھر ایک دوسرے کے پیچھے نماز نہ پڑھنے والے سیاسی مولوی عوام کو دھوکہ دینے کیلئے اکھٹے ہورہے ہیں لیکن عوام جانتے ہیں کہ اسلام کی خدمت کا اعزاز پی پی پی کو حاصل ہے جبکہ حقیقی معنوں میں تبدیلی بھی پی پی پی پہلے لا چکی ہے۔انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی یرغمال ہوچکی ہے ۔میرٹ کے دعویدار سوچ لیں کہ ایک ہی گھر میں رہنے والے مسلم لیگی بھائیوں میں ایک مسلم لیگ کا سینیٹر ہے جبکہ دوسرے نے استعفیٰ دیکرخود کوپی ٹی آئی کا ڈویژنل سیکرٹری بنایاہے ۔ ایم پی اے نے کہا کہ نوجوان طبقہ اور عوام اپنے ووٹ کا معیار مقرر کریں کیونکہ پی ٹی آئی نے نوجوان طبقہ کو اخلاقیات سے عاری کر کے بے روزگاری سے دوچار کیا اوران کے فلاح و بہبود کے لئے کچھ نہیں کیا بلکہ ان کے جذبات سے کھیل کر قوم کے بھی پانچ سال ضائع کئے ۔تبدیلی کے دعویداروں کے قول فعل میں واضح تضاد ہے۔انہوں نے کہا کہ ملاکنڈ کے عوام میرے، پی ٹی آئی کے ایم این اے اور مسلم لیگ کے سینیٹر کے کارکردگی کو سامنے رکھ کر فیصلہ کریں اورائندہ الیکشن میں نوجوان اپنے ساتھ ہونیوالے زیادتی اور دھوکے کا بدلہ لیں۔ انہوں نے کہا کہ ملک کو درپیش چیلنجز سے نکالنے لئے ائندہ الیکشن میں عوام پیپلز پارٹی کو دوبارہ اقتدار میں لائیگی جو تمام محرومیوں کا خاتمہ کریگی۔

مزید : پشاورصفحہ آخر