سندھ پولیس میں کوئی مداخلت نہیں، نتائج چاہئیں: وزیر اعلیٰ

سندھ پولیس میں کوئی مداخلت نہیں، نتائج چاہئیں: وزیر اعلیٰ
سندھ پولیس میں کوئی مداخلت نہیں، نتائج چاہئیں: وزیر اعلیٰ

  

کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن) وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کی زیر صدارت اجلاس میں فینسی نمبر پلیٹس اور سرکاری گاڑیوں کے غیر قانونی استعمال کے خلاف کارروائی کا فیصلہ کیا گیا، وزیر اعلیٰ نے اظہار برہمی کرتے ہوئے کہا کہ فوکس کے باوجود جرائم کنٹرول نہیں ہو رہے۔

تفصیلات کے مطابق وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ کی زیر صدارت امن و امان کی صورتحال پر اجلاس منعقد ہوا۔ ایڈیشنل انسپکٹر جنرل کراچی ڈاکٹر امیر شیخ نے وزیر اعلیٰ سندھ کو بریفنگ دی۔گزشتہ روز پی ای سی ایچ ایس میں قتل کے واقعے پر وزیر اعلیٰ سندھ نے برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ٹارگٹ کلنگ اور اسٹریٹ کرائم پر فوکس کیا ہوا ہے، فوکس کے باوجود یہ جرائم کنٹرول نہیں ہو رہے۔اے آئی جی نے کہا کہ کل کے واقعے کی تحقیقات کر رہے ہیں، ذاتی رنجش کا معاملہ لگتا ہے۔

اجلاس میں فینسی نمبر پلیٹس اور سرکاری گاڑیوں کے غیر قانونی استعمال کے خلاف کارروائی کا فیصلہ کیا گیا۔ وزیر اعلیٰ نے کہا کہ پولیس میں مداخلت نہیں اس لیے نتائج چاہئیں۔اجلاس میں غیر قانونی جگہ پر قائم پولیس اسٹیشنز کو ریگولر جگہوں پر مکمل کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔ وزیر اعلیٰ نے چیف سیکریٹری سندھ اور آئی جی سندھ کو اقدامات کرنے کی ہدایت کی۔وزیر اعلیٰ کو بریفنگ دی گئی کہ سٹریٹ واچ فورس قائم کی گئی ہے جو مختلف پوائنٹس پر پیٹرولنگ کرتی ہے، ضلع جنوبی میں سخت چیکنگ کے باعث سٹریٹ کرائم میں کمی آئی۔

وزیر اعلیٰ نے ہدایت کی کہ کراچی میں چیکنگ کے باعث ٹریفک کا نظام متاثر نہیں ہونا چاہیئے۔ڈی آئی جی نے بتایا کہ گزشتہ چند روز میں 15 اسٹریٹ کرمنلز گرفتار کیے ہیں، لیاری میں 6 ان کاو¿نٹر کیے جس میں 16 کرمنلز گرفتار ہوئے۔ 80 موٹر سائیکلیں پکڑیں، 70 ہزار لیٹر ایرانی پیٹرول پکڑا ہے۔

وزیر اعلیٰ نے کہا کہ کوئٹہ جانے والی بسوں میں ایڈیشنل ٹینک ہیں تو کارروائی کریں۔ ’ساو¿تھ میں وزٹ پر گیا، پولیس نے روکا اور میرا شناختی کارڈ چیک کیا۔ کارڈ چیک کرنے کے بعد میں اہلکار سے پوچھا مجھے پہچانا؟ اس نے کہا نہیں، خوشی ہوئی اچھے طریقے سے چیک کر رہے ہیں‘۔انہوں نے کہا کہ ہر ڈویژن کو جی ایس ایم لوکیٹر، فرانزک لیب و دیگر سہولتیں دینا چاہتا ہوں، جن علاقوں میں جی ایس ایم لوکیٹر نہیں وہاں فراہم کریں گے۔

مزید : قومی /علاقائی /سندھ /کراچی