کاہنہ ہسپتال میں مریضوں کاعلاج معالجہ یقینی بنانے کیلئے ورکشاپ

کاہنہ ہسپتال میں مریضوں کاعلاج معالجہ یقینی بنانے کیلئے ورکشاپ

  



صوئے آصل(نامہ نگار)کاہنہ ہسپتال میں مریضوں کے علاج معالجے کو یقینی بنانے کیلئے ایمرجنسی کی صورتحال مد نظر رکھتے ہوئے کلینیکل ورکشاپ، ایس ایم اے ڈاکٹر فیض الحسن کے علاوہ ایڈمنسٹریٹرعدنان محبوب، احمد سہیل، قمر عباس، شعیب،میجر کامران،میجر پیر زادہ،سجاد شاکر اور ڈاکٹرز، نرسز، پیرا میڈیکل سٹاف اورسکیورٹی نے بڑی تعداد میں شرکت کی۔شرکاء کو ڈاکٹر جنید اور ڈینگی ایکسپرٹ ٹیم نے ڈینگی بخارکی علامات، پیچیدگیوں، احتیاطی تدابیر اور اس کے علاج کے مختلف پہلوؤں پر روشنی ڈالی۔ ڈاکٹرحسام نے کہا کہ ڈینگی کے مرض پر موثر کنٹرول کیلئے عوام کا ساتھ دینا ضروری ہے اور ضرورت اس امر کی ہے کہ ہر شہری اپنے گھر میں صفائی کا خصوصی خیال رکھیں تاکہ ڈینگی مچھر پرورش نہ پا سکے۔میجر پیرز ادہ نے کہا کہ کسی بھی ہنگامی صورتحال کی صورت سے خوفزدہ ہونے کی ضرورت نہیں بلکہ اس کا مقابلہ کرنا چاہیے اور تمام حفاظتی تدابیر اختیار کرنی چاہیے تاکہ زیادہ سے زیادہ لوگ اس سے محفوظ رہ سکیں۔پروفیسرفیض الحسن نے شہریوں سے اپیل کی کہ وہ ڈینگی کے مریض کی مکمل ہسٹری سے ڈاکٹرز کو آگاہ کیا کریں تاکہ اُس کے علاج میں کسی قسم کی تاخیر نہ ہو۔

انہوں نے کہا کہ پنجاب حکومت کے احکامات کی روشنی میں ڈینگی مریضوں کے حوالے سے خصوصی اقدامات یقینی بنائے گئے ہیں اور کاہنہ ہسپتال میں سپیشل وارڈز بنایا گیا ہے،جہاں ڈاکٹرز اور نرسز کی ڈیوٹیاں لگا کر سٹاف کو ہمہ وقت الرٹ رکھا گیا ہے تاکہ ڈینگی کے مریضوں کی تشخیص اور علاج میں سہولت حاصل ہو سکے۔انہوں نے کہا کہ ڈاکٹرز اور طبی عملہ گائنی کے مریضوں کے علاج معالجے میں کوئی کسر اٹھا نہیں رکھے گا اور انشاء اللہ اس چیلنج سے بھرپور طور پر نمٹیں گے۔

مزید : کلچر