ڈائریکٹرفلم زندگی تماشا نے فلم کی ریلیز رکوانے کیخلاف درخواست واپس لے لی

ڈائریکٹرفلم زندگی تماشا نے فلم کی ریلیز رکوانے کیخلاف درخواست واپس لے لی

  



لاہور(نامہ نگار)سول کورٹ سے فلم زندگی تماشا کے ڈائریکٹر عرفان علی کھوسٹ نے فلم کی ریلیز رکوانے کیخلاف درخواست واپس لے لی،سول جج ضیاء الرحمن نے درخواست گزار کی استدعا کو منظور کرتے ہوئے درخواست واپس کردی۔درخواست گزار کاکہناتھا کچھ وجوہات کی وجہ سے فلم کی ریلیز کے خلاف درخواست واپس لینا چاہتا ہوں،فلم زندگی تماشا سنسر بورڈ سے منظور ہوچکی ہے اور 24جنوری کو ملک بھر کے سینما گھروں میں ریلیز کی جانی ہے،عدالت نے درخواست گزار کی استدعا منظور کرتے ہوئے درخواست نمٹا دی۔درخواست گزار کا موقف تھا کہ مذہبی جماعت کی جانب سے فلم کو روکنے کی دھکمیاں دی جارہی ہیں،مذہبی جماعت نے اپنے کارکنوں کو فلم کی ریلیز روکنے کے لیے ہدایات جاری کیں ہیں،فلم میں کوئی ایسا موادشامل نہیں ہے کہ جس سے کسی کے مذہبی جزبات مجروح ہوں،فلم میں معاشرے کا پازیٹو امیج اجاگر کرنے کی کوشش کی گئی ہے،مذہبی جماعت کو فلم کی ریلیز کے خلاف اقدمات کرنے سے روکنے کا حکم دیا جائے۔

مزید : علاقائی