انضمام الحق قومی ٹیم کے کپتان کیسے بنے؟ پہلی مرتبہ ایسا دلچسپ انکشاف کر دیا کہ آپ کو بھی یقین نہ آئے

انضمام الحق قومی ٹیم کے کپتان کیسے بنے؟ پہلی مرتبہ ایسا دلچسپ انکشاف کر دیا ...
انضمام الحق قومی ٹیم کے کپتان کیسے بنے؟ پہلی مرتبہ ایسا دلچسپ انکشاف کر دیا کہ آپ کو بھی یقین نہ آئے

  



لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان کرکٹ ٹیم کے مایہ ناز سابق کپتان و چیف سلیکٹر انضمام الحق نے انکشاف کیا ہے کہ بنگلہ دیش کیخلاف میچ میں راشد لطیف پر پانچ میچوں کی پابندی عائد ہوئی تو انہیں کپتان بنایا گیا اور پھر ریٹائرمنٹ تک ٹیم کی قیادت ہی کرتے رہے۔

تفصیلات کے مطابق بنگلہ دیشی ٹیم کے دورہ پاکستان کے موقع پر انہوں نے 17 سال قبل کھیلے گئے یادگار ٹیسٹ میچ سے متعلق گفتگو کی۔ انہوں نے کہا کہ اس میچ کی پہلی اننگز میں آﺅٹ ہونے کے بعد میں ٹیسٹ کرکٹ سے ریٹائرمنٹ کی سوچ رہا تھا لیکن اللہ تعالیٰ نے ایسا کرم کیا کہ کپتان بن گیا۔

انہوں نے کہا کہ راشد لطیف کپتان تھے جنہوں نے شبیر کی گیند پر فرسٹ سلپ میں شاندار ڈائیو کر کے کیچ پکڑا مگر اس دوران وہ اپنی نظریں گیند پر نہ رکھ سکے اور مجھ سے تصدیق کی کہ کیچ ہوا یا نہیں؟ ہمیں وکٹ درکار تھے اور مجھے لگا کہ وہ کیچ ہو گیا ہے اس لئے میں نے ہاں میں جواب دیا تو انہوں نے اپیل کر دی اور امپائر نے آﺅٹ قرار دیدیا۔ اس روز کھیل ختم ہونے کے بعد جب ہم میچ ریفری کے کمرے میں گئے تو انہوں نے دکھایا کہ گیند تو کوئی آدھ فٹ دور گری تھی جس کے باعث راشد لطیف پر پانچ میچوں کی پابندی عائد کر دی گئی۔

انہوں نے کہا کہ تب میری کپتانی شروع ہوئی اور پھر میں ریٹائرمنٹ تک کپتان رہا، یہاں یہ کہنا چاہوں گا کہ انسان کو اچھے اور برے وقت میں کبھی امید کا دامن ہاتھ سے نہیں چھوڑنا چاہئے، کہاں میں کرکٹ چھوڑنے کی سوچ رہا تھا اور کپتان بن گیا، انسان کو معلوم نہیں ہوتا کہ اگلے لمحے کیا ہونے والا ہے، اس لئے اللہ سے اچھے کی امید رکھنی چاہئے۔

مزید : کھیل