شوہر کی بیوفائی سے ناراض بیوی 3 سال تک میکے میں رہتی رہی لیکن پھر پڑوسن نے ایسی بات بتادی کہ فوراً گھر آگئی

شوہر کی بیوفائی سے ناراض بیوی 3 سال تک میکے میں رہتی رہی لیکن پھر پڑوسن نے ...
شوہر کی بیوفائی سے ناراض بیوی 3 سال تک میکے میں رہتی رہی لیکن پھر پڑوسن نے ایسی بات بتادی کہ فوراً گھر آگئی
سورس:   Pixabay

  

بھوپال (ڈیلی پاکستان آن لائن) بھارتی ریاست مدھیہ پردیش میں ایک خاتون اپنے شوہر کی بیوفائی سے ناراض ہو کر تین سال تک میکے میں رہتی رہی لیکن بعد میں اسے پتہ چلا کہ اس کو جس شخص کی بیوفائی کا بتایا گیا تھا وہ اس کا شوہر نہیں بلکہ ہم نام ہے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق بھوپال میں35 سالہ شخص نے ضلعی لیگل اتھارٹی کو درخواست دی کہ اس کی بیوی گزشتہ تین سال سے ناراض ہو کر میکے میں بیٹھی ہوئی ہے۔ وہ کئی بار بیوی کو منانے گیا ہے لیکن وہ آگے سے کہتی ہے کہ تمہارا جس کے ساتھ معاشقہ ہے اسی کے ساتھ جا کر رہو، حالانکہ میرا ایسا کوئی چکر نہیں ہے۔ شوہر نے دہائی دی کہ اگر اس کی بیوی اور بچے واپس نہ آئے تو وہ مرجائے گا۔

معاملہ ضلعی اتھارٹی کو موصول ہوا تو ناراض بیوی کی پڑوسن بھی بیچ میں کود پڑی اور اس نے اصل حقیقت بیان کی۔ اس نے ناراض بیوی کو بتایا کہ اس نے جس شخص کی بیوفائی کا اس سے تذکرہ کیا تھا وہ دراصل اس کا شوہر نہیں بلکہ اس کا ہم نام تھا۔ ناراض بیوی کو جب حقیقت پتہ چلی تو زندگی کے تین سال ضائع ہونے کا افسوس کرتے ہوئے شوہر کے گھر واپس لوٹ آئی۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -