’ بجلی آئے گی تو ، اسمبلیاں تحلیل ہو گئی ہوں گی “بجلی کا بریک ڈاﺅن ، ٹویٹر پر مضحکہ خیز میمز کی بھر مار

’ بجلی آئے گی تو ، اسمبلیاں تحلیل ہو گئی ہوں گی “بجلی کا بریک ڈاﺅن ، ٹویٹر پر ...
’ بجلی آئے گی تو ، اسمبلیاں تحلیل ہو گئی ہوں گی “بجلی کا بریک ڈاﺅن ، ٹویٹر پر مضحکہ خیز میمز کی بھر مار

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن )لاہور ، کراچی ، اسلام آباد سمیت ملک کے بیشتر شہروں میں بجلی کا بریک ڈاﺅن ہوا ہے جس کے پیش نظر شہری کافی پریشان دکھائی دیتے ہیں اور خرم دستگیر کا کہناہے کہ بجلی کی بحالی میں 10 سے 12 گھنٹے درکار ہوں گے لیکن دلچسپ امر یہ ہے کہ اس پریشان صورتحال میں بھی پاکستانی ٹویٹر پر مضحکہ خیز میمز بنا کر شیئر کر رہے ہیں ۔

تفصیلات کے مطابق خرم دستگیر نے بجلی کے بریک ڈاﺅن کی وجہ بیان کرتے ہوئے کہا کہ وولٹیج اور فریکوئنسی کی ویری ایشن کی وجہ سے ملک میں بجلی کا بریک ڈاون ہوااور بجلی کی مکمل بحالی میں 10 سے 12 گھنٹے لگ سکتے ہیں ۔

ماضی میں عام طور پر جب بے وقت بجلی جائے تو گھر والے چھوٹے بچے کو یہ ضرور کہتے تھے "ذرا" دیکھنا ساتھ والوں کی بجلی آ رہی ہے یا ہماری ہی گئی ہے ، یقینی طور پر یہ ہر انسان کی یاداشت میں تازہ ہو گا لیکن اب اس عمر میں ذرا جدت آ گئی ہے اور یہ کام موبائل فون کے ذریعے لیا جاتا ہے اور اٹھ کر باہر جانے کی زحمت اب کم ہی دیکھنے کو ملتی ہے، اسی سوچ کو مد نظر رکھتے ہوئے ٹویٹر پر دلچسپ میم وائرل ہو رہی ہے، جس میں دکھا یا گیاہے کہ دیسی رشتہ دار بریک ڈاون میں ایک دوسرے سے فون پر پوچھ رہے ہوں گے کہ کیا تمہارے گھر لائٹ آ رہی ہے؟

اس صورتحال میں پی ایس ایل کی فرنچائز اسلام آباد یونائیٹڈ نے بھی حصہ ڈالا اور جنریٹر کے لفظ کے ساتھ حسن علی کی تصویر کا استعمال کیا، کرکٹ کے شائقین تو با آسانی اس میم کا مطلب سمجھ چکے ہوں گے اور جو نہیں سمجھے تو ان کیلئے ہم بتاتے  چلتے ہیں کہ جب حسن علی قومی ٹیم میں شام ہوئے تو وکٹ حاصل کرنے کے بعد ان کے جشن منانے کا سٹائل بالکل ویسا ہی تھا جیسے گھر میں پڑے جنریٹر کو چلانے کیلئے مشقت کی جاتی ہے، اس کی ڈوری کو زور زور سے کھینچ کر۔

ماضی میں پورے ملک کی بجلی ایک ساتھ بند ہونے کے مواقع کم ہی آئے ہیں اور ان میں سے متعدد مواقعوں پر بجلی آنے پر یہی معلوم ہوا کہ جناب ملک میں تخت حکمرانی پلٹ چکا ہے اور ایک ٹی وی  خطاب نشر ہو تا جس میں موجودہ وقت کے آرمی چیف مارشل لاء کےنفاذ کا اعلان کرتے،اسی یاداشت کو بنیاد بناتے ہوئے شامی نامی صارف نے دلچسپ میم بنا کر شیئر کی اور جس میں سابق آرمی چیف اور ڈکٹیٹر ضیاء الحق کی تصویر کے ساتھ لکھا گیا کہ " جیسے ہی لائٹ واپس آئے گی تو معلوم ہو گا کہ اسمبلیاں تحلیل کر دی گئیں ہیں۔"

میمز کا دور دورہ ہو اور مسٹر بین اس میں شامل نہ ہوں ؟ یہ ممکن نہیں، اگر انہیں میمز کا حسن کہا جائے تو غلط نہ ہوگا ، ان کے انداز ہمیشہ ہی توجہ کا مرکز رہے 

بھارتی اداکار نواز الدین صدیقی اور منوج واجپائی یہ دو ایسی شخصیات ہیں جن کے بغیر میمز کا بازار گرم نہیں ہوسکتا ، اور یہ ان کی منفر اداکاری کا نتیجہ ہے۔

اس میں

مزید :

ڈیلی بائیٹس -