ملک گیر بریک ڈاون ، بجلی بحال کب تک ہو سکتی ہے؟ ممکنہ وقت کا تعین ہو گیا

ملک گیر بریک ڈاون ، بجلی بحال کب تک ہو سکتی ہے؟ ممکنہ وقت کا تعین ہو گیا
ملک گیر بریک ڈاون ، بجلی بحال کب تک ہو سکتی ہے؟ ممکنہ وقت کا تعین ہو گیا

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) ملک بھر میں بجلی کے کریک ڈاون کو کئی گھنٹے سے زائد وقت گزرنے کے باوجود مکمل بحالی ممکن نہ ہو سکی، وزیر توانائی خرم دستگیر نے اس حوالے سے رات 10 بجے تک ڈیڈلائن مقرر کی ہے۔

جیو نیوز کے مطابق قومی گرڈ میں آج صبح ساڑھے 7 بجے ہونے والی خرابی کے باعث کراچی، لاہور اور اسلام آباد سمیت ملک کا بیشتر بجلی کے تعطل کا شکار ہوا۔ وزیر توانائی خرم دستگیر نے ملک گیر کریک ڈاون پر ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ اسلام آباد، پشاور، ملتان اور سکھر میں بجلی تقسیم کار کمپنیز کو بجلی جزوی طور پر بحال کر دی گئی ہے، واپڈا اور کے الیکٹرک کو بجلی کی جلد از جلد بحالی کیلئے قریبی رابطے میں ہیں، کوشش کر رہے ہیں ہے کہ طے کردہ ڈیڈلائن سے قبل برقی رو بحال کردی جائے۔

ملک کے صنعتی دارالحکومت کراچی کا 90 فیصد حصہ بجلی سے محروم ہے۔ کے ای ذرائع کی جانب سے بتایا گیا کہ نیشنل گرڈ میں خلل بریک ڈاؤن کا ممکنہ سبب ہے، بجلی کی مکمل بحالی میں 5 سے 6 گھنٹے لگ سکتے ہیں۔

لاہور الیکٹرک سپلائی کمپنی (لیسکو) ذرائع کا کہنا تھا کہ لاہور سمیت تمام بڑے، چھوٹے شہر بجلی سے محروم ہوئے ہیں، ابتدائی معلومات کے مطابق جنوبی و شمالی مین لائنوں میں بیک وقت فالٹ آیا، بجلی کی فراہمی معطل ہونے کے باعث اورنج لائن ٹرین کو بند کر دیا گیا۔ فیصل آباد، ٹوبہ ٹیک سنگھ، گوجرہ، سرگودھا، شور کوٹ، پیر محل اور ملتان ریجن سمیت دیگر کئی شہروں میں بھی بجلی کی فراہمی معطل ہے۔ ترجمان آئیسکو نے بتایا کہ اسلام آباد کے 117 گرڈ اسٹیشنز کو بجلی کی فراہمی تاحال معطل ہے۔بلوچستان کے تمام اضلاع میں بھی بجلی کی فراہمی معطل ہوئی، اس حوالے سے کوئٹہ الیکٹرک سپلائی کمپنی (کیسکو) حکام کا کہنا تھا کہ گدو سےکوئٹہ آنے والی بجلی کی دونوں ٹرانسمیشن لائنیں ٹرپ کر گئیں جس کی وجہ سے صوبے کے بڑے حصے میں بجلی کی فراہمی معطل ہوئی

مزید :

قومی -