سپریم کورٹ کا آڈٹ نہ کرانے والے اداروں کودوبارہ نوٹس بھیجنے کا حکم

سپریم کورٹ کا آڈٹ نہ کرانے والے اداروں کودوبارہ نوٹس بھیجنے کا حکم
سپریم کورٹ کا آڈٹ نہ کرانے والے اداروں کودوبارہ نوٹس بھیجنے کا حکم

  

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) سپریم کورٹ نے آڈٹ نہ کرنے والے اداروں کو دوبارہ نوٹس بھیجنے کی ہدایات جاری کرتے ہوئے سماعت 5 اگست تک ملتوی کر دی ہے۔ چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے آڈٹ نہ کرانے والے اداروں کے بارے میں کیس کی سماعت کی۔ دوران سماعت اے جی پی آر نے عدالت کو بتایا گیا کہ 19 ادارے آڈٹ نہیں کراتے اور وجہ بتائے بغیر آڈٹ سے انکار کرتے ہیں، حکام کے مطابق ان کی ٹیم آڈٹ کیلئے جاتی ہے لیکن اسے وجہ بتائے بغیر واپس بھجوادیا جاتاہے، آڈٹ نہ کرانے والے اداروں میں ڈی ایچ اے، پاک چائنہ کارپوریشن، ایف بی آر، واہ آرڈیننس فیکٹری سمیت دیگر ادارے بھی شامل ہیں۔ اس پر سپریم کورٹ نے آڈٹ نہ کرانے والے اداروں کو دوبارہ نوٹس بھیجنے کی ہدایات جاری کرتے ہوئے کیس کی مزید سماعت 5 اگست تک ملتوی کردی گئی۔

مزید : اسلام آباد /اہم خبریں