کے پی کے میں آئندہ حکومت ایم ایم اے کی ہو گی : فضل الرحمن

کے پی کے میں آئندہ حکومت ایم ایم اے کی ہو گی : فضل الرحمن

  

ڈیر ہ اسماعیل خا ن،اسلام آباد، بٹ خیلہ (ایجنسیاں) ایم ایم اے کے مر کز ی صدر مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ نگرا ن وزراء اپنی حدود میں رہیں ختم نبو ت کے مسئلے کو نہ چھیڑیں تو یہ ان کے لئے بہتر ہو گا تحر یک انصاف کے وفد نے قادیا نیو ں کے سر برا ہ سے ملا قات میں تعاون مانگا تھا اور اسکے بد لے میں ختم نبو ت کے قا نو ن میں تر میم کا وعد ہ کیا جو کہ پی ٹی آئی کے شفقت محمود نے اپنے چیئر مین عمران خا ن کی ہد ایا ت پر پورا کر نے کی بھرپور کو شش کی لیکن سینٹ میں پکڑ ے گئے وہ قصبہ کیچ میں ڈسٹرکٹ ممبر ملک فتح شیر کی وسیع و عریض حویلی میں بڑے انتخا بی جلسہ سے خطا ب کر رہے تھے جس کی صدارت امیدوار حلقہ پی کے 96 عبد الحلیم خا ن قصور یہ نے کی اس موقع پر معروف سما جی شخصیت فیصل علی خا ن اور جے یو آئی کے ضلعی جنر ل سیکرٹری احمد خان کامرانی بھی مو جو د تھے۔ انہوں نے کہا کہ تحر یک انصاف کے پی کے میں ایک یونیورسٹی اور نہ ہی ایک ڈیم بنا سکی ہم نے ڈیر ہ کو زرعی یونیورسٹی دی ، ہسپتا ل بنا ئے ، سی آر بی سی بنا کر علا قہ کو خو شحا لی دی گومل زا م کو حقیقت کا روپ بھی ہم فقیرو ں نے دیا فسٹ سیکنڈ اور تھر ڈ لفٹ کنا ل بنا کر 12 لاکھ ایکڑ بنجر ارا ضی کو آباد بھی ہم کرینگے ۔دریں اثنا ء ایک انٹرویو میں متحدہ مجلس عمل کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے کہاہے کہ لگ رہے کہ ایم ایم اے خیبرپختونخوا میں حکومت بنانے کی پوزیشن میں آ جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ ہر اتحاد میں چھوٹی بڑی جماعتیں ہوتی ہیں اور ہم نے ایک اصول طے کیا ہے کہ پالیسیاں برابری کی بنیاد پر طے کریں گے اور نمائندگی اکثریت اور صوبوں کی بنیاد پر ہو گی۔مزید برآں متحدہ مجلس عمل پاکستان کے صدر و جے یو آئی کے امیر مولانا فضل الرحمن نے کہاہے کہ پشتون بیلٹ میں مذہب کی جڑیں اکھاڑنے کے لیے پی ٹی آئی کو مسلط کیا گیا،کوئی غیرت مند پشتون پی ٹی آئی کا جھنڈا نہیں اٹھاسکتا، جب بنگال بنگلہ دیش بن گیا تو ذوالفقار علی بھٹو نے کہاکہ شکر ہے پاکستان بچ گیا،پیپلزپارٹی کی حکومت میں ختم نبوت کے قانون کو ختم کرنے کی سازش کو ہم نے ناکام بنایا۔جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمن نے کہا کہ ملک میں قیادت کی تبدیلی کا وقت آگیاہے، پشتون بیلٹ میں مذہب کی جڑیں اکھاڑنے کے لیے پی ٹی آئی کو مسلط کیا گیا،ہم پشتون کی عزت و غیرت کی حفاظت کررہے ہیں،کوئی غیرت مند پشتون پی ٹی آئی کا جھنڈا نہیں اٹھاسکتا،جمہوریت سے بات شروع کر کے جمہوریت پر ختم کرنے والی پیپلز پارٹی نے شیخ مجیب الرحمن کی اکثریت کا انکار کیا جس کے نتیجہ میں پاکستان دو لخت ہوگیا،انہوں نے کہا کہ پائے روم کے ساتھ توہین رسالت کے قانون کو ختم کرنے کے وعدے کرنے والوں کو دینی جماعتوں اور عوام کے اتحاد نے ناکام بنایا،چوری کا مال برآمد ہوگیا لیکن چور کون تھا ، یہ پتہ نہیں چل رہا تھا، ہائی کورٹ کے حکم پر جب رپورٹ شائع ہوئی تو پتہ چلاکہ چور پی ٹی آئی کا شفقت محمود تھا۔انہوں نے کہاکہ عوام کے ووٹ سے قیادت ، حکومت اور نظام بدلے گا، عوام کو اپنے ووٹ کی طاقت کا ادراک ہوناچاہیے۔

فضل الرحمان

مزید :

علاقائی -