گوجرانوالہ ،درندہ صفت نوجوان نے 8سالہ بچی کو بداخلاقی کے بعد قتل کردیا

  گوجرانوالہ ،درندہ صفت نوجوان نے 8سالہ بچی کو بداخلاقی کے بعد قتل کردیا

  

گوجرانوالہ(بیورو رپورٹ)درندہ صفت نوجوان نے تیسری جماعت کی طالبہ آٹھ سالہ بچی کوبداخلاقی کے بعد گلے میں کپڑے کا پھندا ڈال کر قتل کردیا ۔ ملزم کو گرفتار کرلیا گیا ۔ تفصیلات کے مطابق تھانہ کینٹ کے علاقہ گاءوں روپو سلہر کے رہائشی ظفراللہ کی اہلیہ رقیہ بی بی اپنی بیٹی آٹھ سالہ (س) جوکہ تیسری جماعت کی طالبہ ہے کو لیکر کام کاج کے لیے حویلی گئی اور کام کاج میں مصرو ف ہوگئی جبکہ بچی کھیلتے ہوئے حویلی سے باہر نکل آئی ۔ اسی دواران درندہ صفت آفتاب ولد شرافت قوم گھمن نے اسے زبردستی اٹھا کرقریبی حویلی میں لے جا کربداخلاقی کا نشانہ بنا ڈالا اورجرم چھپانے کے لیے اس نے(س) کے گلے میں کپڑے کا پھندا ڈال کر قتل کردیا ۔ تشویش لاحق ہونے پر والدہ نے محمد بوٹا ،مبشر اقبال کے ہمراہ تلاشی شروع کر دی جب وہ ماسٹر شہباز کی حویلی کے قریب پہنچے تو اسکا دروازہ کھلا ہوا تھا ۔ اند داخل ہوئے تو ملزم آفتاب برہنہ حالت میں تھا اوردیکھتے ہی موقع سے فرار ہوگیا جبکہ بچی (س) مردہ حالت میں پڑی تھی ۔ بتایا جاتا ہے کہ ملز م تحصیل ڈسکہ داءوکے کا رہائشی تھا ۔ اس کے والد شرافت نے چند سال قبل اپنے بھائی کو قتل کردیا تھا اور جیل میں ہی وفات پاگیا تھا ۔ اب ملزم اپنے گاءوں سے مکان فروخت کر کے اپنے ننھیال روپو سلہر میں ہی رہائش پذیر تھا ۔ مقتول بچی کی نماز جنازہ ادا کردی گئی جس میں علاقہ بھر سے کثیر تعداد میں لوگوں نے شرکت کی اور معصومہ کو سپردخاک کردیا گیا ۔ دوسری جانب کینٹ پولیس نے مقدمہ درج کرکے ملزم کو گرفتار کر لیا ہے اور مصروف کارروائی ہے ۔

مزید :

صفحہ آخر -