شوبز شخصیت بھی ”فیس ایپ“کا شکار،بڑھاپے کی تصاویر سوشل میڈیا پر وائرل

شوبز شخصیت بھی ”فیس ایپ“کا شکار،بڑھاپے کی تصاویر سوشل میڈیا پر وائرل

  



لاہور(فلم رپورٹر)آج کل اداکارہ بوڑھا ظاہر کرنے والی نئی ایپلیکیشن کے دیوانہ نظر آتے ہیں اور یہی وجہ ہے کہ سوشل میڈیا پراداکاروں کے اپنے ہی دوستوں اور دوسرے قریبی لوگوں کو پہچاننے سے انکار کرتے ہوئے یہ سوچنے پر مجبور ہوجاتا ہے کہ آخر یہ کون ہے یا میں نے اس شخص کو کہاں دیکھا ہے۔ جی ہاں شخصیت کی ساری تبدیلی کا کریڈٹ ”فیس ایپ“کو جاتا ہے جس میں ویسے تو بے شمار آپشن موجود ہیں لیکن زیادہ تر لوگوں کو شاید بڑھاپا پسند ہے یہی وجہ ہے ہر کوئی اس ایپ کے ذریعے خود کو بوڑھا کرکے دیکھ رہا ہے۔پہلے تو صرف عام لوگ ہی اس سے مستفید ہورہے تھے لیکن اب ہمارے فنکار بھی کسی سے پیچھے نہیں رہے جو اپنے بڑھاپے کی تصاویر خوشی خوشی سوشل میڈیا پر شیئر کر رہے ہیں۔ ماہرہ خان،عمائمہ ملک، عاطف اسلم،فواد خان، اقرا عزیز،صبا قمر،مہوش حیات،سجل علی،ہمایوں سعید،یاسر حسین،انعام خان اور عروہ حسین سمیت بے شمار فنکار اپنی تصاویر پوسٹ کرچکے ہیں جن پر صارفین دلچسپ تبصرے بھی کررہے ہیں۔شوبز کے مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والی شخصیات کا کہنا ہے اس ایپلیکیشن کو اتنا سنجیدہ نہیں لینا چاہیے یہ محض تفریح کا ایک ذریعہ ہے ہم لوگ ہر معاملہ کو سنجیدہ بنا لیتے ہیں خرم شیراز ریاض،شاہد حمید،معمر رانا،مسعود بٹ،حسن عسکری،شان،سید نور،میلوڈی کوئین آف ایشیاء پرائڈ آف پرفارمنس شاہدہ منی،صائمہ نور،میگھا،ماہ نور،انیس حیدر،ہانی بلوچ،یار محمد شمسی صابری،سہراب افگن،ظفر اقبال نیویارکر،عذرا آفتاب،حنا ملک،انعام خان،فانی جان،عینی طاہرہ،سینئر اداکار غلام محی الدین، میرا،موسیٰ خان،احسن خان، معمر رانا اور افتخار ٹھاکر،عائشہ جاوید،میاں راشد فرزند،سدرہ نور،نادیہ علی،شین، سائرہ  نسیم،صبا ء کاظمی،سٹار میکر جرار رضوی،آغا حیدر،دردانہ رحمان،ملک طارق،مجید ارائیں،طالب حسین،قیصر ثنا ء اللہ خان،مایا سونو خان،عباس باجوہ،مختار چن،آشا چوہدری،اسد مکھڑا،وقا ص قیدو،ارشدچوہدری،چنگیز اعوان،حسن مراد،حاجی عبد الرزاق،حسن ملک،عتیق الرحمن،اشعر اصغر،آغا عباس،صائمہ نور،خالد معین بٹ،مجاہد عباس،ڈائریکٹر ڈاکٹر اجمل ملک،کوریوگرافر راجو سمراٹ،صومیہ خان،حمیرا چنا،اچھی خان،شبنم چوہدری،محمد سلیم بزمی،سفیان،انوسنٹ اشفاق،استاد رفیق حسین،فیاض علی خاں،پروڈیوسر شوکت چنگیزی،ظفر عباس کھچی،ڈی او پی راشد عباس،پرویز کلیم اور نجیبہ بی جی نے کہاکہ ہر کسی کو اپنی زندگی اپنے انداز سے جینے کا حق ہے ہمیں کسی کے ذاتی معاملے میں دخل اندازی کی کوئی ضرورت نہیں ہے۔

مزید : کلچر