کراچی مویشی منڈی میں 1 لاکھ سے زائد جانور لائے جاچکے،رضا چاولہ

کراچی مویشی منڈی میں 1 لاکھ سے زائد جانور لائے جاچکے،رضا چاولہ

  



کراچی(اسٹاف رپورٹر)سپر ہائی وے پر قائم ایشیاء کی سب سے بڑی قربانی کے جانوروں کی مویشی منڈی میں 5 جولائی سے اب تک 1 لاکھ 30ہزار سے زائد قربانی کے جانور لائے جا چکے ہیں۔میڈیا سیل کی ترجمان رضا چاولہ کے مطابق 900ایکڑ رقبے پر مشتمل مویشی منڈی میں 22 بلاک وی آئی پی،6 وی آئی پی اور دیگر جنرل بلاک بنائے گئے ہیں۔انہوں نے بتایاکہ جانوروں کو کانگو وائرس ور دیگر موذی امراض سے بچاؤ کے لیے روزانہ کی بنیاد پرفیومیگیشن کی جارہی ہے،اس ضمن میں 30وٹنری ڈاکٹرز پر مشتمل 5 کیمپ قائم کیے گئے ہیں،جہاں جانوروں میں کسی بھی قسم کی بیماری کے سدباب کے لئے انہیں دوائی فراہم کردی جاتی ہیں اور موقع پر ہی ان کا علاج کیا جاتا ہے۔انہوں نے بتایاکہ بیوپاریوں کو جانوروں کے لیے روزانہ کی بنیاد پر 16 لٹر پانی مفت فراہم کیا جارہا ہے جبکہ اضافی پانی پر ڈیڑھ روپے فی لیٹر رقم وصول کی جاتی ہے۔48بلاکس پر مشتمل اس مویشی منڈی آنے والے جانوروں سے فیس کی مد میں 1600 روپے اور بکرے کی فیس 1000روپے وصول کی جاتی ہے۔ وی وی آئی پیز ایریاز میں آفریدی کیٹل فارم، سورتی کیٹل فارم، سرمہ والاوالا کیٹل فارم، سیون ایٹ سکس کیٹل فارم، سوپر اسٹار کیٹل فارم، حیدرآباد کی جانب سے جگ مگ کرتے خوبصورت اسٹال سجا دیئے گئے ہیں۔فوڈ اسٹریٹ پر سجی دکانوں میں عام نرخ پر شہریوں کی سہولت کے لیے کھانے پینے کی ہر چیز میسر ہے بچوں کے ہمراہ رات کو آنے والی فیملیزجہاں اپنے لئے قربانی کے جانور پسند کر رہے ہیں وہیں لذیذ کھانوں سے بھی لطف اندوز ہورہے ہیں کوئی جانور کے بھاؤ تاؤ کر رہا ہے کوئی جانوروں کے ساتھ سیلفیاں بنا رہا ہے ہر طرف میلے کا سماں ہے۔شہریوں کے لیے یہ مویشی منڈی جہاں قربانی کے جانوروں کی خریداری کا مرکز ہے وہیں پکنک پوائنٹ کی حیثیت بھی اختیار کر چکی ہے۔رات ہو یا دن پرامن ماحول میں روزلاکھوں شہری سپرہائی وے مویشی منڈی کا رخ کر رہے ہیں پارکنگ ایریا میں صحافیوں کے لیے پارکنگ کی مفت جگہ مختص کی گئی ہے کہ عام شہریوں سے بائیک کی فیس 20 روپے اور کار کی 30 روپے وصول کی جارہی ہے اور ماہانہ کار فیس 5 ہزار اور موٹر سائیکل سے 3000 لے کر انہیں مویشی منڈی کے اندر جانے کی سہولت دی جاتی ہے۔جانوروں کو پانی کی سہولت کے لیے پوری مویشی منڈی میں 70 سے زائد پختہ ندیاں بنا کر ان میں آٹھ بڑے ٹینکرز کے ذریعے پانی کی سپلائی روز جاری ہے آزاد کشمیر کے پی کے گلگت بلوچستان پنجاب اور اندرون سندھ کے چھوٹے بڑے شہروں سے آنے والے جانوروں کی فیومیگیشن کی جارہی ہے بیوپاریوں کی سہولت کے لیے بیچ مرکز میں ایک ایڈمنسٹریٹر بلاک قائم کیا گیا ہے ساتھ ہی حبیب میٹرو بینک کی جانب سے اے ٹی ایم کی سہولت بھی موجود ہے جہاں مویشیوں کے بیوپاری اپنے اسٹال کی بکنگ کے لئے چالان جمع کرارہے ہیں تقریباتمام اسٹالز بک ہو چکے ہیں کسی بھی قسم کی شکایت کے فوری ازالہ کے لیے ایک مانیٹرنگ سیل قائم کیا گیاہے جبکہ حساس کیمرے نصب کرکے مشکوک سرگرمیوں کی نگرانی کی جا رہی ہے صحافیوں کو ہر قسم کی آگاہی کے لیے لمحہ بہ لمحہ میڈیا سیل سے خبریں بروقت ارسال کی جاتی ہیں۔ایڈمنسٹریٹر بلاک میں انتظامیہ کی جانب سے بیوپاریوں کو کسی بھی قسم کی مشکل سے بچنے کے لئے مکمل آگاہی دی جا تی ہیمویشی منڈی آنے والے شہری اور بیوپاری کسی بھی قسم کی شکایت کے لیے انتظامیہ سے 24گھنٹے رابطہ کر سکتے ہیں

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...