تیمر گرہ،مذبحہ خانوں پر ٹیکس بڑھانے کیخلاف قصائیوں کا احٹجاجی مظاہرہ

تیمر گرہ،مذبحہ خانوں پر ٹیکس بڑھانے کیخلاف قصائیوں کا احٹجاجی مظاہرہ

  



تیمرگرہ (بیورورپورٹ)  ٹی ایم اے تیمرگرہ کی جا نب سے مزبحہ خانوں پر ٹیکس بڑھانے کے خلاف قصائیوں کا احتجاجی مظا ہرہ  ٹی ایم اے کے خلاف شدیدی نعرہ بازی. قصا ئیوں نے دھمکی دی کہ اگر ایک ہفتہ کے اندر اندر ٹیکس واپس نہ لیا گیا تو ضلع بھر میں قصائی غیر معینہ تک ہڑتال کرکے گوشت کی فروخت بند کردینگے تفصیلات کے مطابق ٹی ایم تیمرگرہ کی جانب سے تیمرگرہ کے مذبحہ خانوں میں فی بھینس /گائے کی زبحہ کرنے  پرفیس  100روپے سے بڑھاکر 200روپے مقرر کرنے کے خلاف سراپا احتجاج بن گئے اس حوالے سے قصا ئیوں نے سٹی ناظم عا لم زیب ایڈوکیٹ کی قیادت میں گور گوری چوک سے شہید چوک تک جلوس نکالا شرکاء نے پلے کارڈ اٹھا رکھے تھے جس پرفیس بڑھانے کے خلاف مذمتی نعرے درج تھے تیمرگرہ پریس کلب کے سامنے احتجاجی مظاہرہ سے انجمن قصا بان تیمرگرہ کے صدر نوید خان،پیپلز پارٹی لویر دیر کے سیکرٹری اطلاعات و سٹی ناظم عالم زیب ایڈوکیٹ،انجمن قصابان کے صدر نوید خان، جا وید قصاب، واصل خان قصاب نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ ضلع سوات میں قصائیوں سے فی بھینس زبحہ کرنے کا فیس 50روپے ہے جبکہ ٹی ایم اے تیمرگرہ ان سے 100روپے فیس وصول کررہی ہے  لیکن اب اس فیس کو 200روپے مقرر کرکے دگنا کیا گیا جوکہ ظلم اور نا انصافی ہے انھوں نے الزام لگا یا کہ ٹی ایم اے تیمرگرہ عوام کو میو نسپل سروسز فراہم کرنے میں نا کام ہوگئی ہے عوام کو ایک ہفتہ سے پانی کی سپلائی بند ہے جبکہ تیمرگرہ گندگی کے ڈھیر میں تبدیل ہو گئی ہے انھوں نے مطالبہ کیا کہ ٹی ایم اے مذ بحہ خانوں پر نئے ٹیکس لگانے کا فیصلہ واپس لیکر 100روپے کا فیس بر قرار رکھیں بصورت دیگر ضلع بھر میں قصائی غیر معینہ مدت تک ہڑتال کرنے پر مجبور ہونگے جس کی تمام تر ذمہ داری ٹی ایم اے تیمرگرہ کے ناظم پرعائد ہوگی۔ 

مزید : پشاورصفحہ آخر