تحریک انصاف کی دعا بھٹو سمیت 3 رہنماؤں کو گھوٹکی سے بے دخل کرنے کی ہدایت

تحریک انصاف کی دعا بھٹو سمیت 3 رہنماؤں کو گھوٹکی سے بے دخل کرنے کی ہدایت
تحریک انصاف کی دعا بھٹو سمیت 3 رہنماؤں کو گھوٹکی سے بے دخل کرنے کی ہدایت

  



اسلام آباد، گھوٹکی(ڈیلی پاکستان آن لائن) الیکشن کمیشن آف پاکستان نے پیپلزپارٹی کے علی نواز مہر اور تحریک انصاف کے حلیم عادل شیخ اور طاہرہ دعا بھٹو کو گھوٹلے سے بے دخل کرنے اور فوری طورپر علاقے کو چھوڑنے کی ہدایت کردی، اس سلسلے میں ریٹرننگ افسر نے مجسٹریٹ کے خصوصی اختیارات استعمال کرتے ہوئے ہدایت نامہ بھی جاری کردیا۔ الیکشن کمیشن نے یہ نوٹس پیپلزپارٹی کی درخواست پر لیا۔

دنیانیوز کے مطابق پیپلزپارٹی نے اپنی درخواست میں موقف اپنایا کہ پی ٹی آئی اراکین پولنگ  سٹیشنزمیں گھس کرووٹرزکودھمکارہے ہیں اور خط لکھ کرالیکشن کمیشن کوپی ٹی آئی اراکین کے روئیے کی جانب توجہ دلائی ۔الیکشن کمیشن نے این اے205میں انتخابی ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کاسخت نوٹس لیتے ہوئے ہدایت کی کہ انتخابی ضابطہ اخلاق کے مطابق انتخابات کے دوران کوئی اسمبلی ممبر حلقے کا دورہ نہیں کرسکتا۔ادھر پیپلزپارٹی کی شکایت پر ایک سب انسپکٹر کو حراست میں لے کر حوالات میں بند کردیاگیا، سب انسپکٹرعبدالخالق پولنگ اسٹیشن رحم والی پرڈیوٹی دے رہاتھاجن پر آزادامیدواراحمد علی نے پولنگ سٹیشن کا وزٹ کرانے کا الزام لگایا۔

یادرہے کہ گھوٹکی کے حلقہ این اے 205 ضمنی الیکشن میں پولنگ کا عمل جاری ہے، پیپلز پارٹی کے محمد بخش مہر اور آزاد امیدوار احمد علی میں کانٹے کا مقابلہ متوقع ہے۔گھوٹکی کی خالی ہونے والی نشست پر ماموں اور بھانجا آمنے سامنے ہیں، سردار محمد بخش خان مہر پیپلز پارٹی جبکہ بھانجا احمد علی خان مہر آزاد امیدوار کی حیثیت سے الیکشن لڑ رہے ہیں۔ گھوٹکی این اے 205 میں کل ووٹرز کی تعدا 3 لاکھ 60 ہزار 875 ہے۔تمام تر پولنگ سٹیشنز پر پولیس، رینجرز اور آرمی کے جوان تعینات ہیں، سیکیورٹی ہائی الرٹ ہے۔ این اے 205 کی نشست جی ڈی اے کی ایم این اے علی محمد مہر کے انتقال کے باعث خالی ہوئی تھی۔

مزید : علاقائی /اسلام آباد /سندھ /گھوٹکی


loading...