قبائلی اضلاع میں الیکشن، تحریک انصاف نے اپنے ہی رہنماؤں کیخلاف کارروائی کا اعلان کردیا

قبائلی اضلاع میں الیکشن، تحریک انصاف نے اپنے ہی رہنماؤں کیخلاف کارروائی کا ...
قبائلی اضلاع میں الیکشن، تحریک انصاف نے اپنے ہی رہنماؤں کیخلاف کارروائی کا اعلان کردیا

  



پشاور (ویب ڈیسک) خیبر پختونخوا کے وزیر اعلیٰ محمود خان نے کہا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) قبائلی علاقوں میں ہونے والے صوبائی انتخابات میں آزاد امیدوار کی حیثیت سے لڑنے والے پارٹی اراکین کے خلاف کارروائی کرے گی۔ ڈان نیوز کے مطابق خیبرپختونخوا میں ضم ہونے والے قبائلی علاقوں (سابق فاٹا) میں تاریخ کے پہلے صوبائی انتخابات منعقد ہونے پر پریس کانفرنس کرتے ہوئے محمود خان کا کہنا تھا کہ 'میں یہ بات واضح کردوں کہ ہمارے چند امیدواروں نے آزادانہ طور پر انتخابات میں حصہ لیا اور انہوں نے پارٹی کو نقصان پہنچایا ہے، ان کے خلاف کارروائی کی جائے گی، انتخابات میں تحریک انصاف کی دیگر سیاسی جماعتوں کے مقابلے میں بہتر کارکردگی رہی ہے۔یادرہے کہ  الیکشن کمیشن کی جانب سے جاری ہونے والے ابتدائی نتائج کے مطابق قبائلی اضلاع میں آزاد امیدواروں نے 16 میں سے 6 نشستیں حاصل کی ہیں جبکہ تحریک انصاف کو 5، جمعیت علما اسلام (ف) کو 3 اور عوامی نیشنل پارٹی اور جماعت اسلامی کو ایک ایک نشست ملی ہے۔وزیر اعلیٰ نے صحافیوں کو بتایا کہ انہوں نے آزاد امیدواروں کو مبارک باد دی ہے اور انہیں حکمراں جماعت میں شمولیت اختیار کرنے اور اپنے حلقے کی ترقی میں کردار ادا کرنے کی دعوت دی ہے،ان کا کہنا تھا کہ قبائلی علاقوں سے 2 منتخب اراکین کو قانون کے مطابق کابینہ کا حصہ بنایا جائے گا،انتخابات صاف و شفاف تھے اور صوبائی حکومت نے پولنگ کے عمل میں کوئی مداخلت نہیں کی،اگر ہم نے مداخلت کی ہوتی تو نتائج مختلف ہوتے۔انہوں نے سیکیورٹی فورسز اور ای سی پی کو انتظامات سنبھالنے اور عوام کو گھروں سے نکل کر ووٹ ڈالنے پر شکریہ ادا کیا۔

مزید : علاقائی /خیبرپختون خواہ /پشاور