”طالبان کاوفد مجھ سے ملناچاہتاتھا لیکن ۔۔۔“، وزیر اعظم عمران خان نے اہم انکشاف کردیا

”طالبان کاوفد مجھ سے ملناچاہتاتھا لیکن ۔۔۔“، وزیر اعظم عمران خان نے اہم ...
”طالبان کاوفد مجھ سے ملناچاہتاتھا لیکن ۔۔۔“، وزیر اعظم عمران خان نے اہم انکشاف کردیا

  



واشنگٹن(ڈیلی پاکستان آن لائن) وزیر اعظم عمران خان نے کہاہے کہ کچھ ماہ پہلے طالبان کا وفد مجھ سے ملنا چاہتا تھا لیکن افغان حکومت نہیں چاہتی تھی کہ طالبان کی مجھ سے ملاقات ہو,اب میں واپس جاﺅں گا تو طالبان سے ملوں گا۔

امریکی تھنک ٹینک یو ایس انسٹی ٹیوٹ آف پیس میںسوالوں کے جواب دیتے ہوئے وزیر اعظم عمران خان نے کہا کہ پاکستان کی ملٹری اسٹیبلشمنٹ میں دو طرح کا ذہن تھا جس کے باعث سٹریٹجک گہرائی کا تصور وجود میں آیا۔ پاکستان کے ایک طرف انڈیا ہے اور دوسری طرف افغانستان ہے اور پاکستان بیچ میں سینڈوچ بنا ہوا تھا لیکن آج پاکستان میں سٹریٹجک گہرائی کا کوئی تصور نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ آج پاک فوج اور حکومت ایک ہی پیج پر ہے ، میں نے جب بھارتی پائلٹ کو رہا کرنے کا فیصلہ کیا تو آرمی میرے پیچھے کھڑی تھی۔

وزیر اعظم نے کہا کہ ہم سمجھتے ہیں کہ ہم کسی طوربھی افغانستان کے اندرونی معاملات میں مداخلت نہیں کریں گے ،اور افغانستان کے لوگ خود ہی اپنا فیصلہ کریں گے۔ انہوں نے انکشاف کیا کہ کچھ ماہ پہلے طالبان کا وفد مجھ سے ملنا چاہتا تھا کیونکہ میں نے ہمیشہ افغانستان کے فوجی حل کی مخالفت کی ہے۔ لیکن افغان حکومت نہیں چاہتی تھی کہ طالبان کی مجھ سے ملاقات  ہواب میں واپس جاﺅں گا تو طالبان سے ملوں گا۔ افغانستان میں الیکشن ہونا چاہیے جس میں طالبان کو بھی حصہ لینا چاہیے۔

مزید : قومی