سلیم صافی نے امریکی حکام اورپاکستانی سٹیبلشمنٹ کے درمیان مذاکرات کے حوالے سے بڑا دعویٰ کردیا

سلیم صافی نے امریکی حکام اورپاکستانی سٹیبلشمنٹ کے درمیان مذاکرات کے حوالے ...
سلیم صافی نے امریکی حکام اورپاکستانی سٹیبلشمنٹ کے درمیان مذاکرات کے حوالے سے بڑا دعویٰ کردیا

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)تجزیہ کار سلیم صافی نے کہاہے کہ مستقبل میں جو چیزیں ہونی ہیںاس حوالے سے امریکی حکام اور پاکستانی سٹیبلشمنٹ کے درمیان مذاکرات ہورہے ہیں، امریکہ نے اپنی پالیسی سے ابہام ختم کردیا ہے ۔

جیونیوز کے پروگرام ”آج شاہ زیب خانزادہ کے ساتھ“میں گفتگو کرتے ہوئے سلیم صافی نے کہاکہ وزیراعظم عمران خان کو دورہ امریکہ کی دعوت دینے کامقصد افغانستان ہے ، امریکہ اس وقت افغانستان سے نکلنا چاہتا ہے اور اس نے اپناابہام ختم کردیاہے۔

انہوں نے کہا کہ اس حوالے سے پاکستانی اسٹیبلشمنٹ نے بھی اقدامات شروع کردیے ہیں، مستقبل میں جو چیزیں ہونی ہیں اس حوالے سے امریکی حکام اور پاکستانی سٹیبلشمنٹ کے درمیان مذاکرات ہورہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ پاکستان امریکہ کے ساتھ معاہدہ کرچکاہے کہ وہ طالبان کوجنگ بندی پر آمادہ کرے گیا اور افغان حکومت کے ساتھ مذاکرات پر بھی آمادہ کرے گا ، اگر وہ بلاواسطہ نہ بھی ہوں تو بلواسطہ طورپر ہی ہوجائیں۔

مزید : قومی