محکمہ جیل خانہ جات کا جیلوں میں کیش کاؤنٹر قائم کرنے کا فیصلہ

محکمہ جیل خانہ جات کا جیلوں میں کیش کاؤنٹر قائم کرنے کا فیصلہ

  

لاہور (کر ائم رپو رٹر) محکمہ جیل خانہ جات پنجاب نے لاہور کی دو جیلوں سمیت پنجاب بھر کی 42 جیلوں میں مختلف بینکوں کے کیش کاؤنٹر قائم کرنے کا فیصلہ کیا ہے اور اس سلسلے میں آئی جی پولیس جیل خانہ جات پنجاب مرزا شاہد سلیم بیگ نے ملک کے 17 بینکوں کو جیلوں میں کیش کاؤنٹر قائم کرنے کے لئے مراسلے ارسال کردئیے ہیں۔ جیلوں میں کیش کاؤنٹر کے قیام کا مقصد جیل اکاؤنٹ میں موجود قیدیوں کے 10 کروڑ روپے میں ہیر پھیر کرنے سے بچانا ہے۔ بتایا گیا ہے کہ جیلوں میں قید قیدیوں کے لواحقین اپنے قریبی رشتہ داروں سے ملاقات کے وقت جو پیسے دے کر جاتے تھے۔ ان پیسوں میں سے جیل انتظامیہ کے اہلکار جگا ٹیکس وصول کرلیتے تھے اس طرح قیدیوں تک ان کی اصل رقم کا پہنچنا مشکل ہو جاتا تھا۔ مگر کیش کاؤنٹر کے قیام کے بعد قیدیوں کے رشتے دار اپنے عزیز و اقارب قیدیوں کو براہ راست دینے کی بجائے جیلوں میں قائم کئے جانے والے کیش کاؤنٹر کے ذریعے ادا کریں گے۔ واضح رہے کہ اس وقت پنجاب کی 42 جیلوں میں 47 ہزار قیدی موجود ہیں۔ جن کے جیلوں میں قائم کئے جانے والے کیس کاؤنٹر پر عارضی بینک اکاؤنٹ بھی کھولے جائیں گے۔

مزید :

علاقائی -