ماں پر تشدد کرنے والے ارسلان کا ویڈیو پیغام بھی سامنے آ گیا

ماں پر تشدد کرنے والے ارسلان کا ویڈیو پیغام بھی سامنے آ گیا
ماں پر تشدد کرنے والے ارسلان کا ویڈیو پیغام بھی سامنے آ گیا

  

راولپنڈی (ڈیلی پاکستان آن لائن )دو دن قبل سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو وائرل ہوئی جس میں ایک ارسلان نامی نوجوان نے اپنی والدہ کو شدید تشدد کا نشانہ بنایا تاہم اب وہ اپنے کیے پر شرمندگی کا اظہار کرتے ہوئے معافی کا طلبگار ہے ۔

تفصیلات کے مطابق ارسلان نے ویڈیو پیغام جاری کرتے ہوئے کہا کہ ” میں نے اپنی والدہ کے ساتھ زیادتی کی ، ان کی دل آزاری کی ، میرے سے کچھ ہوا نہیں کیونکہ انہوں نے میری بیوی کے ساتھ ہاتھا پائی شروع کر دی ، میرے گھر کے کچھ معاملات ایسے چلے ، جس کی وجہ سے مجھ پر کافی دباﺅ تھا ، میں پاکستان اور پوری دنیا کی ماﺅں سے معافی مانگتاہوں ، میں نے اپنی والدہ کے ساتھ زیادتی کی ، اللہ مجھے معاف کرے ، میں اپنی والدہ سے خاص طور پر معافی مانگتا ہوں ۔“

خیال رہے راولپنڈی کے ارسلان نامی شخص نے اپنی اہلیہ کے ساتھ مل کر اپنی والدہ پر تشدد کیا تھا جس کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہو گئی تھی۔ دونوں ملزموں کے خلاف تھانہ صادق آباد میں مقدمہ درج کیا گیا تھا۔یہ واقعہ راولپنڈی کے علاقے تھانہ صادق آباد کی حدود میں پیش آیا تھا۔ بعد ازاں اس بدبخت نے اپنی اہلیہ سمیت عبوری ضمانت کروا لی تھی تاہم عدالت نے ملزمان کو پولیس کی تفتیش میں شامل ہونے کا حکم دے دیا ہے۔

ارسلان نامی اس شخص نے اپنی اہلیہ کیساتھ ایڈیشنل سیشن جج مرزا شاہد بیگ کی عدالت سے ضمانت کروائی، جس کی روبکار پولیس کو موصول ہو گئی ہے۔عدالت نے ملزمان کو 6 اگست تک گرفتار نہ کرنے اور مقدمہ میں شامل تفتیش ہونے کا حکم دیا ہے۔ ملزم ارسلان اور اس کی اہلیہ بسمہ کی ضمانت قبل از گرفتاری 50 ہزار روپے کے مچلکوں کے عوض منظور کی گئی ہے۔

مزید :

قومی -