ملٹری اکاؤنٹس سوسائٹی کا جنرل سیکرٹری بے ضابطگیوں کی درخواستوں سے دستبردار

ملٹری اکاؤنٹس سوسائٹی کا جنرل سیکرٹری بے ضابطگیوں کی درخواستوں سے دستبردار

لاہور(اپنے نمائندے سے)ملٹری اکاؤنٹس کوآپریٹو ہاؤسنگ سوسائٹی ماڈل ٹاؤن میں ہونے والی مالی بے ضابطگیوں کا بھانڈہ پھوڑنے والے جنرل سیکرٹری کی مبینہ جعلسازی ،گٹھ جوڑ کے نتیجے میں کوآپریٹو ،نیب ،اینٹی کرپشن اور محکمہ پولیس سمیت انصاف کے حصول کے لئے عدلیہ میں دائرکئے جانے والے کیس واپس لے لئے گئے ،ممبرا ن کی کثیر تعدا د سوسائٹی میں لوٹ کھسوٹ کے خلاف سراپا احتجاج بن گئی۔ تفصیلات کے مطابق سوسائٹی ممبران کی آواز اور ان کا ہمدرد بن کر ظہیر الدین بابر اور غازی الدین بابر سمیت دیگر عہد یداران کے خلاف کرپشن،اختیارات کا ناجائز استعمال،فراڈ جعلسازی،فنڈ زمیں غبن ،ریکارڈ میں ردوبدل اور سوسائٹی کے پلاٹوں پر قبضوں میں ملوث ہونے کا الزام لگاتے ہوئے مذکورہ جنرل سیکرٹری ملٹری اکاؤنٹس سوسائٹی الیاس قادری نے کروڑوں روپے کی بے ضابطگیوں میں ملوث تمام افراد کو بے نقاب بھی کیا تھا جبکہ بعد ازاں انصاف کے حصول کے لئے نیب،اینٹی کرپشن ،صوبائی محتسب اور عدلیہ کے دروازے پر دستخط دینے والا موجودہ جنرل سیکرٹر ی الیاس قادری بھی درخواستوں اور کیسز سے دستبردار ہو گیا بلکہ اسی انتظامیہ کا ایک سرگرم رکن بن گیا ہے ۔ستم بالائے ستم یہ کہ محکمہ کوآپریٹو کی جانب سے ملٹری اکاؤنٹس سوسائٹی کے اکاؤنٹس منجمند کئے گئے تھے تاکہ الیکشن کے بعد جیت کر آنے والی قیادت اکاؤنٹس میں موجود سوسائٹی ممبران کی امانت 20کروڑ روپے ترقیاتی کاموں میں استعمال کر سکے مگر موجود ہ انتظامیہ نے آپس میں ساز باز ہو کر کروڑوں روپے کی رقم خلاف ضابطہ نکلوا کر اپنے ذاتی مفادات میں استعمال کی جو کہ کرپشن کی کھلم کھلا مثال بن چکی ہے ۔اسی طرح سوسائٹی کے مین داخلی راستوں پر آنے والے انتہائی قیمتی پلاٹ بھی بند بانٹ کی نظر ہو چکے ہیں ۔جس میں محکمہ کوآپریٹو کی جانب سے حکم امتناعی کے باوجود پلاٹس فروخت کرنے کا سلسلہ جاری ہے ۔ سوسائٹی ممبران کی کثیر تعداد کا کہناہے کہ ہمارے لئے پہلے مسیحا بننے والا ہی ہمارے خلاف محاذ بنا کر کھڑا ہو ہو گیا ہے ،سوسائٹی میں پلاٹوں کی ری الاٹمنٹ سے لے کے آپسی بند بانٹ بھی آپس میں مل بیٹھ کر کھا رہے ہیں ۔بدنینی کی حد یہ ہے کہ 100سے زائد ممبران کو ری الاٹمنٹ کی آڑ میں وہ پلاٹ دیئے گئے جن پر درجنوں فٹ گہرے کھڈے ہیں اور جو کسی بھی حالت میں رہائش یا آباد ہونے کے قابل نہیں ہیں ۔ہم نے کوآپریٹو کے تمام متعلقہ افسران تک اس لوٹ کھسوٹ اور جنرل سیکرٹری کی بد نیتی کی آواز پہنچائی ہے لیکن بااثر انتظامیہ اورجنرل سیکریٹری کے خلاف کوئی کارروائی کرنے کو تیار نہیں ہے ،ہماری چیف جسٹس ہائی کورٹ ۔ڈی جی نیب ۔ڈی جی اینٹی کرپشن سے دردمندانہ اپیل ہے کہ ملٹری اکاؤنٹس ہاؤسنگ سوسائٹی میں جاری اس لوٹ کھسوٹ اور ان کے کرتا دھرتاؤں کے خلاف فوری کارروئی کی جائے۔ ڈسٹرکٹ آفس کوآپریٹو کے ترجمان کا کہنا ہے کہ ہم سوسائٹی ممبران کی طرف سے کسی بھی قسم کی بے ضابطگی کی درخواست موصول ہونے پر فور طور پر کارروائی کرتے ہیں ۔موجودہ جنرل سیکرٹر ی الیاس قادری کی طرف سے ملٹری اکاؤنٹس سوسائٹی انتظامیہ کی جانب سے لوٹ کھسوٹ اور سوسائٹی ممبران کے فنڈز میں خرد برد کی متعدد درخواستیں موصو ل ہوئیں تھیں جن پر حسب ضابطہ کارروئی آگے بڑھ رہی تھی ۔اب خود مدعی ان درخواستوں سے دستبردار ہو گیا ہے تو ہم کس کے خلاف ایکشن لے سکتے ہیں ۔موجودہ جنرل سیکریٹری کے خلاف روزنامہ پاکستان کی نشاندہی ٖ پر فوری کارروائی کرکے ممبران کی حق تلفی نہیں ہونے دی جائے گی۔دوسری طرف جنرل سیکریٹری ملٹری اکاؤنٹس کوآپریٹو ہاؤسنگ سوسائٹی الیاس قادری کا کہنا تھاکہ میں نے سوسائٹی انتظامیہ کی کرپشن کے خلاف محکمہ کوآپریٹو سمیت دوسرے احتسابی اداروں میں درخواستیں دی تھیں لیکن تھک ہار کر خود ہی بیٹھ گیا ہوں ۔اس ملک میں انصاف نام کی کوئی چیزنہیں ہے ۔مجھ پر لگائے گئے تما الزامات بے بنیاد ہیں ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1