اویس شاہ کے اغواکا کیس ہائی پروفائل کیس ، بازیابی کیلئے حساس ادارے مدد کریں ، آئی جی سندھ

اویس شاہ کے اغواکا کیس ہائی پروفائل کیس ، بازیابی کیلئے حساس ادارے مدد کریں ...

 کراچی ( اے این این ) آئی جی سندھ اے ڈی خواجہ نے کہا ہے کہ اویس شاہ کے اغوا کا کیس ہائی پروفائل کیس ٗبازیابی کے لیے حساس ادارے مدد کریں ٗ اویس علی شاہ شہر کے گنجان علاقے سے اغوا ہوا ٗافسوس کسی نے بروقت پولیس کو اطلاع دینے کی زحمت نہ کی ٗ اغواکاروں کا تاحال کوئی مطالبہ سامنے نہیں آیا ۔۔کراچی میں پریس کانفرنس کے دوران آئی جی سندھ نے کہا کہ چیف جسٹس سندھ ہائی کورٹ کے صاحبزادے اویس شاہ کو سہ پہر ڈھائی بجے شہر کے ایک گنجان علاقے سے اغوا کیا گیا لیکن کسی شہری نے پولیس کو واقعے کی اطلاع نہ دی۔ ان کے لاپتہ ہونے کی اطلاع پولیس کو رات 9 بج کر10 منٹ پر ان ہی کے اہل خانہ سے ملی جب کہ اہل خانہ کو ساڑھے 8 بجے گمشدگی کی اطلاع مل گئی تھی۔اللہ ڈنو خواجہ کا کہنا تھا کہ اویس شاہ کا اغوا ایک ہائی پروفائل کیس ہے، ان کے اغوا کے پیچھے تمام عناصرکو ہرپہلو سے دیکھ رہے ہیں، ہم نے اس گتھی کوسلجھا دیا گیا ہے کہ اویس شاہ گم نہیں بلکہ اغوا ہوئے ہیں لیکن یہ کیس اغوا برائے تاوان کا بھی نہیں ہے کیونکہ اب تک اویس شاہ کے اغوا کے حوالے سے کوئی کال یا پیغام موصول نہیں ہوا۔ ہمارے بلوچستان اور پنجاب پولیس سے بھی رابطے میں ہیں جب کہ فوج، اورقانون نافذ کرنے والے دیگر اداروں سے بھی مدد مانگی گئی ہے۔آئی جی سندھ کا کہنا تھا کہ اگر کسی صوبے سے کوئی سراغ ملاتو اس صوبے کے انتظامیہ کی مدد بھی لیں گے۔

مزید : کراچی صفحہ اول