سرگودھا ، دریائت جہلم میں نہاتے ہوئے دو سگے بھائی ڈوب کر جاں بحق

سرگودھا ، دریائت جہلم میں نہاتے ہوئے دو سگے بھائی ڈوب کر جاں بحق

 سرگودہا(بیورو رپورٹ) نواحی قصبہ کچہ مجوکہ کے مقام پر دریائے جہلم میں نہاتے ہوئے دو سگے بھائیوں سمیت ایک ہی خاندان کے چار نوجوان ڈوب گئے، دو بھائیوں کی لاشیں نکال کر سپرد خاک کر دی گئیں، جبکہ دو نوجوانوں کو زندہ بچا لیا گیا، بتایا جاتا ہے کہ قصبہ نہنگ کے محنت کش عبدالستار کے دو بیٹے محمد عارف اور حمید اپنے کزن شاہ رخ اور محمد رمضان کے ہمراہ لوڈ شیڈنگ اور گرمی سے بچنے کے لئے کچہ مجوکہ کے قریب دریائے جہلم میں نہا رہے تھے کہ دریا کی تیز لہروں نے انہیں اپنی لپیٹ میں لے لیا، جس پر دریائے پر نہانے والوں اور قریبی آبادیوں کے لوگوں نے ریسکیو کر کے دو نوجوانوں شاہ رخ اور محمد رمضان کو زندہ بچا لیا، دریا کی لہروں نے 18 سالہ محمد عارف کی لاش اگل دی، جبکہ 22 سالہ حمید کی لاش کئی گھنٹے بعد ملی، محمد عارف اور محمد حمید سگے بھائی اور محنت کش عبدالستار کے بیٹے بتائے جاتے ہیں، واقعہ پر ہنستے بستے گھر سمیت علاقہ میں کہرام مچ گیا، ہر آنکھ اشکبار دکھائی دے رہی تھی۔ اہل علاقہ کا کہنا ہے کہ مرنے والے دونوں بھائی انتہائی ملنسار اور صوم و صلوٰۃ کے پابند تھے اور روزہ ہونے پر لوڈ شیڈنگ کی وجہ سے دریا پر نہانے کیلئے گئے تھے۔

جاں بحق

مزید : کراچی صفحہ اول