ایان علی کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کا معاملہ، وکلاءکی نوک جھوک پر سپریم کورٹ کا اظہار برہمی، عدالت کو مچھلی منڈی نہ بنائیں: جسٹس عظمت سعید

ایان علی کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کا معاملہ، وکلاءکی نوک جھوک پر سپریم کورٹ ...
ایان علی کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کا معاملہ، وکلاءکی نوک جھوک پر سپریم کورٹ کا اظہار برہمی، عدالت کو مچھلی منڈی نہ بنائیں: جسٹس عظمت سعید

  

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) ایان علی کا نام ایگزیٹ کنٹرول لسٹ (ای سی ایل) میں ڈالے جانے کے معاملے کی سپریم کورٹ میں سماعت ہوئی سرکاری وکیل اور ایان علی کے وکیل کے درمیان نوک جھوک پر عدالت نے برہمی کا اظہار کیا۔ جسٹس عظمت سعید نے کہا کہ عدالت کو مچھلی منڈی نہ بنائیں ۔

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کیلئے یہاں کلک کریں

نجی ٹی وی جیو نیوز کے مطابق ایان علی کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کے معاملے کی سپریم کورٹ میں سماعت ہوئی۔ سرکاری وکیل نے عدالت کو بتایا کہ یہ معاملہ یہاں زیر التواءہونے کے باوجود سندھ ہائیکورٹ سماعت کر رہی ہے جس پر ایان علی کے وکیل کا کہنا تھا کہ سندھ ہائیکورٹ کی کارروائی اس کیس سے مختلف ہے۔ ایان علی کے وکیل نے مزید کہا کہ سیکرٹری داخلہ نے نے ہائیکورٹ میں بیان دیا کہ ایان علی آزاد ہے لیکن وزارت داخلہ کہہ رہی ہے کہ مر جائیں گے جانے نہیں دیں گے، وزارت داخلہ آئین کا مذاق اڑا رہی ہے۔

روزنامہ پاکستان کی خبریں اپنے ای میل آئی ڈی پر حاصل کرنے اور سبسکرپشن کیلئے یہاں کلک کریں

سرکاری وکیل کا کہنا تھا کہ ایان علی کے وکیل اخبار کی سرخی بنانا چاہتے ہیں جس پر دونوں وکلاءکے درمیان نوک جھوک ہوئی اور عدالت نے برہمی کا اظہار کیا۔ دونوں وکلاءکی بار بار مداخلت پر عدالت نے حکم لکھوانا چھوڑ دیا۔ جسٹس عظمت سعید نے کہا کہ وکلاءعدالت کو مچھلی منڈی نہ بنائیں۔

مزید : اسلام آباد /اہم خبریں