لسوڑے اور شیشم کے پتے شوگر کنٹرول کرتے ہیں،طبی ماہرین

لسوڑے اور شیشم کے پتے شوگر کنٹرول کرتے ہیں،طبی ماہرین

لاہور)پ ر) دودھ، دہی، لسی اور سافٹ ڈرنکس استعمال کرنیوالے شوگر کے مریضوں کا صحت مند رہنا ناممکن ہے۔شوگر کے بدپرہیز مریضوں کا مختلف پیچیدہ امراض کا شکار ہونا لازمی ہے۔ دار چینی، لونگ، رائی، اجوین، پودینا اورر ادرک کے علاوہ شیشم کے پتے اور لسوڑھے کا پھل تمام قسم کی شوگر کو کنٹرول کرنے میں مددگار ثابت ہوتا ہے۔ ان خیالات کا اظہار ماہرین علاج بالغذا حکیم غلام فرید میر، حکیم محمد افضل میو، حکیم محمد فیصل طاہر صدیقی، حکیم محمدیونس، حکیم میاں محمد ادریس اور حکیم حافظ محمد عمر نے دواخانہ باب الفضل پرانی انارکلی لاہور میں شوگر سے پیدا ہوانیوالی پیچیدگیاں اور ان کا علاج کے حوالے سے منعقدہ مجلس مذکراہ میں گفتگو کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہا کہ شوگر کے علاج میں بدپرہیزی کرنا مختلف پیچیدہ اور ضدی امراض جن میں فالج، ہارٹ اٹیک، گردوں کا فیل ہونا اور جگر کے فیل ہونے کی صورت میں مریضوں کا فوت ہوجانا ہمارے معاشرے میں عام ہے۔ انہوں نے بتایا کہ طب مفرد اعضاء (علاج بالغذا)کے فارما کوپیا کے مطابق شوگر کی تمام اقسام کا علاج بڑی کامیابی سے کیا جارہا ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1