امریکی خاتون اول کی پہنی جیکٹ سوشل میڈیا پر متنازعہ ہوگئی

امریکی خاتون اول کی پہنی جیکٹ سوشل میڈیا پر متنازعہ ہوگئی

ٹیکساس(آئی این پی) امریکی خاتون اول میلانیا ٹرمپ کی غیر قانونی تارکین وطن سے علیحدہ کیے گئے بچوں سے ملاقات کے دوران پہنی جیکٹ سوشل میڈیا پر متنازعہ شکل اختیار کر گئی۔بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی اہلیہ میلانیا ٹرمپ نے اچانک غیر قانونی طور پر امریکا میں مقیم والدین سے علیحدہ کیے گئے بچوں سے کیمپ میں جا کر ملاقات کی انہوں نے کچھ وقت بچوں کے ساتھ گزارا۔ان بچوں کے والدین اپنے ممالک سے غیر قانونی طور پر امریکا میں داخل ہوئے تھے۔امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے میکسیکو سے امریکا داخل ہونے والے تارکین وطن کے حوالے سے قوانین سخت کر دیئے تھے جس کے تحت غیر قانونی تارکین وطن کو ان کے شیر خوار بچوں تک سے علیحدہ کردیا گیا تھا۔ تاہم میلانیا ٹرمپ نے سب سے پہلے اس غیر انسانی رویئے کی مذمت کرتے ہوئے بچوں کی اپنے والدین سے علیحدگی کو نہایت افسوسناک صورت حال قرار دیا تھا۔معصوم بچوں کی اپنے والدین سے علیحدگی کی دلخراش وڈیوز اور تصاویر پر سوشل میڈیا میں یہ معاملہ زور پکڑ گیا جس پر امریکی صدر نے بچوں کی علیحدگی کے معاملے پر کانگریس کو قانون سازی کا کہا جس کے بعد ڈونلڈ ٹرمپ نے گزشتہ روز تارکین وطن کو ان کے بچوں کے ساتھ رکھنے سے متعلق ایگزیکٹیو آرڈر پر دستخط کردیئے۔ اس صدارتی حکم کے نفاذ کے بعد تارکین وطن والدین کو ان کے بچوں کے ہمراہ رکھا جائے گا۔میلانیا ٹرمپ نے تارکین وطن کے کیمپ کے دورے پر سبز رنگ کی جیکٹ پہن رکھی تھی جس کی پشت پرلکھا تھا I REALLY DONT CARE, DO U? یعنی مجھے کسی کی پروا نہیں،کیا آپ کو ہے؟ میلانیا ٹرمپ کی جیکٹ نے سوشل میڈیا پر نئی بحث چھیڑ دی۔ عمومی طور پر لوگوں کا خیال تھا کہ یہ ایک پیغام تھا جو کہ میلانیا کے بارے میں پھیلائے جانے والی افواہوں کا جواب تھا۔ کچھ کا کہنا تھا کہ یہ خاص تارکین وطن سے متعلق میلانیا کی رائے پر تنقید کرنے والوں کے لیے ایک اظہار تھا تاہم میلانیا کے ترجمان نے ان باتوں کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ جیکٹ پر درج الفاظ کے پیچھے کوئی خفیہ پیغام نہیں ہے۔ میڈیا کو جیکٹ کے بجائے دورے کے مندرجات پر توجہ مرکوز رکھنی چاہیئے۔

جیکٹ

مزید : صفحہ اول