پارلیمنٹ کو سیاسی بیوفائی کے ماہرین سے نجات دلانا ہوگی:لیاقت بلوچ

پارلیمنٹ کو سیاسی بیوفائی کے ماہرین سے نجات دلانا ہوگی:لیاقت بلوچ

ملتان(سٹی رپورٹر)متحدہ مجلس عمل اور جماعت اسلامی پاکستان کے سیکرٹری جنرل لیاقت بلوچ نے کہاہے کہ پاکستان نازک ترین حالات سے گزر رہاہے ۔ مستقبل میں بڑے امکانات موجود ہیں ، حالات کو پاکستان کے حق میں تبدیل کرنے کے لیے اہل ، جفاکش ، دیانتدار نمائندوں کی (بقیہ نمبر57صفحہ12پر )

ضرورت ہے ۔ پارلیمنٹ اور صوبائی اسمبلیوں کو کرپٹ نااہل اور سیاسی بے وفائی کے ماہرین سے نجات دلانا ہوگی ۔ عوام متحدہ مجلس عمل کا ساتھ دیں ان شاء اللہ پاکستان استحکام ، خوشحالی اور پائیدار امن کی طرف لوٹ آئے گا ۔ سیاست اور ریاست میں تعلقات کا ر کا توازن ذمہ دار ، شائستہ او ر اہل قیادت ہی دے سکتی ہے ۔ علماء کرام متحد ہوں ، مساجد ، منبرو محراب سے نظریہ پاکستان کی حفاظت اور بقاء کے لیے کردار ادا کریں۔لیاقت بلوچ نے کہاکہ متحدہ مجلس عمل کے مرکزی پارلیمانی بورڈ نے پنجاب ، سندھ ، خیبر پختونخوا اور بلوچستان صوبائی پارلیمانی بورڈز کی سفارشات کی متفقہ منظوری دے دی ہے ۔ قومی اسمبلی کی 8 اورچاروں صوبائی اسمبلیوں کی متنازعہ بیس نشستوں پر 23 جون کو متحدہ مجلس عمل کی سپریم کونسل اپنے اجلاس میں حتمی فیصلہ کردے گی ۔ سپریم کونسل کا اجلاس مولانا فضل الرحمن کی صدارت میں منعقد ہوگا ۔ سرا ج الحق ، علامہ ساجد نقوی ، پیر اعجاز ہاشمی ، پروفیسر ساجد میر اپنے ایک ایک نمائندے کے ساتھ شریک ہوں گے۔

لیاقت بلوچ

مزید : ملتان صفحہ آخر