بینظیر بھٹو کی زندگی پر فلم سے متعلق بختاور بھٹو کے قانونی کارروائی کے اعلان پر مہوش حیات بھی میدان میں آ گئیں، ایسی بات کہہ دی کہ ہر پاکستانی کے دل جیت لئے

بینظیر بھٹو کی زندگی پر فلم سے متعلق بختاور بھٹو کے قانونی کارروائی کے اعلان ...
بینظیر بھٹو کی زندگی پر فلم سے متعلق بختاور بھٹو کے قانونی کارروائی کے اعلان پر مہوش حیات بھی میدان میں آ گئیں، ایسی بات کہہ دی کہ ہر پاکستانی کے دل جیت لئے

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) محترمہ بینظیر بھٹو شہید کی 65 ویں سالگرہ کے موقع پر مہوش حیات نے سوشل میڈیا پر بتایا کہ سابق وزیراعظم پاکستان کی زندگی پر ایک فلم بنانے کی تیاریاں ہو رہی ہیں اور وہ اس فلم میں اپنے کیرئیر کا سب سے پہلے کردار ادا کرنے جا رہی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں۔۔۔مصری شہری فٹ بال ورلڈکپ کا میچ دیکھ کر گھر آیا تو بیوی اور بیٹیوں کو ایسی حالت میں دیکھ لیا کہ قیامت ٹوٹ پڑی، پورے ملک میں ہنگامہ برپا ہو گیا

اس اعلان نے سوشل میڈیا پر ہنگامہ برپا کر دیا اور ہر کوئی فلم کے ذریعے محترمہ بینظیر بھٹو شہید کی زندگی سے جاننے کیلئے پرجوش ہو گیا تاہم بینظیر کی بیٹی بختاور بھٹو زرداری نے اس پراجیکٹ کی مخالفت کرتے ہوئے کہا کہ ان کے خاندان سے رضامندی حاصل نہیں کی گئی۔

انہوں نے ٹوئٹر پر جاری اپنے پیغام میں کہا ”اس پراجیکٹ کے حوالے سے محترمہ کے ورثاءیا بچوں سے قطعی طور پر کوئی رضامندی نہیں لی گئی۔ یہ بالکل ناقابل قبول ہے اور ہم اس کیخلاف قانونی چارہ جوئی کریں گے۔“

مہوش حیات بختاور بھٹو کے اس اعلان پر میدان میں آ گئی ہیں اور واضح طور پر کہا ہے کہ ابھی یہ پراجیکٹ ابتدائی مراحل میں ہے اور اگر اسے عملی جامہ پہنایا گیا تو یقینا محترمہ بینظیر بھٹو شہید کے ورثاءسے اجازت لی جائے گی۔

مہوش حیات نے لکھا ”آپ کی والدہ کی حیران کن زندگی پر مبنی فلم کا پراجیکٹ ابھی بہت ابتدائی مراحل میں ہے۔ یہ آپ کے خاندان کی رضامندی کے بغیر ہو سکتا ہے اور نہ ہی ہو گا۔ مجھے یقین ہے کہ اس پراجیکٹ پر کام کرنے والی ٹیم کام آگے بڑھانے سے پہلے آپ سے ضرور رابطہ کرے گی۔“

انہوں نے اپنی بات آگے بڑھاتے ہوئے لکھا ”دوسری جانب، ایک اداکارہ ہونے کی حیثیت سے میں اپنے حقیقی آئیڈیل کی تلاش میں زیادہ سے زیادہ تحقیق کر رہی ہوں۔ کسی بھی فلم سے قطع نظر میں آپ سے کسی روز ملاقات کرنا پسند کروں گی تاکہ محترمہ بینظیر بھٹو شہید کے بارے میں زیادہ سے زیادہ جان سکوں۔“

اس سے قبل انہوں نے بینظیر بھٹو پر لکھی ایک کتاب پکڑے اپنی تصویر شیئر کی تھی اور لکھا تھا ”آج محترمہ بینظیر بھٹو کی 65 ویں سالگرہ ہے۔ انہوں نے اپنی زندگی میں بلاشبہ جو کامیابیاں حاصل کیں، ان پر روشنی ڈالنے کا یہ بہترین وقت ہے۔“

"We have broken glass ceilings, we have broken the stereotypes, and we have been and continue to be prepared to go the extra mile, to be judged by unrealistic standards, to be held more accountable." Today would have been Mohtarma Benazir Bhutto's 65th birthday. It is an ideal time to reflect on her undoubted achievements. I have never really been a political person but leaving that aside there is no denying the great strides she made for women's empowerment and equality in our country - everything we are still fighting for even today. There was a time when she made women believe that almost anything was possible - she gave us hope and inspired us to reach for the stars. I am privileged to have been given the opportunity to research and learn more about her life and sitting here I can only reflect on so much more that could have been had she not lost her life so tragically. The sign of a true leader is the legacy they leave behind and the reverence with which the people remember her irrespective of party allegiances. She was a truly remarkable woman and I look forward to giving life to her story soon. ☑️ #MH #MehwishHayat #lostinreality

A post shared by Mehwish Hayat (@mehwishhayatofficial) on

مزید : ڈیلی بائیٹس /تفریح