موٹرسائیکل پر بیٹھے لڑکا لڑکی کی زبردستی شادی کروادی گئی کیونکہ۔۔۔

موٹرسائیکل پر بیٹھے لڑکا لڑکی کی زبردستی شادی کروادی گئی کیونکہ۔۔۔
موٹرسائیکل پر بیٹھے لڑکا لڑکی کی زبردستی شادی کروادی گئی کیونکہ۔۔۔

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

نئی دلی(نیوز ڈیسک) لڑکا لڑکی موٹر سائیکل پر بیٹھ کر سیر کو نکلیں اور راستے میں ہی شادی ہو جائے، ایسا انوکھا قصہ سنا تھا کبھی آپ نے؟ یہ عجب ماجرا بھارت میں پیش آیا ہے، اور اس ملک میں ایسے واقعات پیش آتے رہتے ہیں۔

ٹائمز آف انڈیا کے مطابق ریاست آسام کے علاقے رنگجولی سے تعلق رکھنے والا نوجوان لڑکا اور اس کی دوست لڑکی 19 جون کے روز موٹر سائیکل پر سیر کو نکلے تھے۔ جب وہ پکھورپور گاؤں کے قریب سے گزر رہے تھے تو لوگوں نے انہیں گھیر لیا اور ان کی تفتیش شروع کر دی گئی۔ جب پتا چلا کہ دونوں آپس میں شادی شدہ نہیں ہیں تو انہیں بے حیائی کا مرتکب قرار دے کر ان کے ساتھ خاصی بدسلوکی کی گئی اور پھر یہ معاملہ مقامی پنچایت کے سامنے پیش کر دیا گیا۔ فیصلہ یہ ہوا کہ دونوں کی فوری شادی کروا دی جائے اور پھر زبردستی اس فیصلے پر عملدرآمد بھی کر دیا گیا۔

آسام کے ڈائریکٹر جنرل پولیس کلدار سائکیہ کا کہنا تھا کہ انہیں اس واقعے کی شکایت موصول ہوئی ہے اورانہوں نے ذمہ داران کے خلاف کاروائی کا حکم دے دیا ہے۔ پولیس کا کہنا ہے کہ واقعے کے ذمہ دار دو افراد کو گرفتار کرلیا گیا ہے جبکہ باقی مفرور ہیں اور ان کی تلاش جاری ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس /بین الاقوامی