سخت گرمی میں کے الیکٹرک کی نااہلی و ناقص کارکردگی پھر عیاں ہو گئی ہے: حافظ نعیم الرحمن

سخت گرمی میں کے الیکٹرک کی نااہلی و ناقص کارکردگی پھر عیاں ہو گئی ہے: حافظ ...

  

کراچی (این این آئی)امیر جماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمن نے شدید گرمی اور بعض علاقوں میں لاک ڈاؤن کے باوجود کے الیکٹرک کی جانب سے مسلسل اور طویل لوڈشیڈنگ کی شدید مذمت کی ہے اور کہا ہے کہ کے الیکٹرک کی نا اہلی و ناقص کارکردگی سخت گرمی کے موسم میں ایک بارپھر عیاں ہو گئی ہے۔اووربلنگ اور جعلی فیول ایڈجسٹمنٹ کے ذریعے شہریوں کو لوٹا جا رہا ہے،انہوں نے مطالبہ کیا کہ نیپرا کے الیکٹرک کی بد ترین کارکردگی کا نوٹس لے،جرمانہ عائد کر کے اس کا لائسنس منسوخ کرے۔ حافظ نعیم الرحمن نے کہا کہ کمپنی کے تمام دعوے جھوٹے ثابت ہوئے ہیں اور عوام شدید ذہنی و جسمانی اذیت اور پریشانی کا شکار ہو گئے ہیں۔ خواتین، بچوں و بزرگوں اور لاک ڈاؤن کے باعث گھروں میں محدود اور آئسولیٹ ہونے والوں کے لیے گھروں میں رہنا دشوار ہو گیا ہے۔ موجودہ کورونا وبائی صورتحال کے دوران آن لائن تعلیم حاصل کرنے والے طلبہ و طالبات کوبھی شدید دشواری کا سامنا ہے۔وفاقی حکومت اور نیپرا کے الیکٹرک کی گرفت کرنے اور اس کے خلاف تادیبی کارروائی کرنے کے بجائے اس کی سرپرستی اور پشت پناہی کر رہے ہیں۔ عوام پر ظلم ڈھانے والی کمپنی کو سبسیڈی دینے کا سلسلہ جاری ہے اور کے الیکٹرک کو اپنی پیداواری صلاحیت بڑھانے، اپنے تمام پاور پلانٹس کو چلانے کے لیے مجبور کرنے کے بجائے اس کی سرپرستی کی جا رہی ہے۔ جبکہ دوسری طرف کے الیکٹرک نے صارفین پر 2ارب 26کروڑ روپے کا اٖاضافی بوجھ ڈالنے کی بھی تیاری کر لی ہے جس کے لیے کمپنی کی جانب سے ماہانہ اور سہ ماہی ٹیرف میں تبدیلی کے لیے نیپرا میں درخواست دائر کر دی گئی ہے۔ حافظ نعیم الرحمن نے کہا کہ کے الیکٹرک کو صرف اپنے منافع کی فکر ہے اسے کراچی کے عوام کی ان مشکلات اور پریشانیوں سے کوئی سرو کار نہیں جو بجلی کی عدم فراہمی کے باعث عوام کو جھیلنا پڑتی ہیں۔ کے الیکٹرک اگر معاہدے کے مطابق اپنی پیداواری صلاحیت میں اضافہ کرے، ترسیلی نظام کو اپ گریڈ کرے اور اپنے تمام پاور پلانٹس چلائے تو کراچی کے عوام کی بجلی کی ضروریات پوری ہو سکتی ہیں اور نیشنل گرڈ سمیت کسی اور ذرائع سے بجلی کی ضرورت باقی نہ رہے مگر افسوس کہ کئی سال گزر گئے اور کے الیکٹرک نے اپنی کارکردگی کو بہتر بنانے کے لیے مطلوبہ سرمایہ کاری نہیں کی۔ حافظ نعیم الرحمن نے کہا کہ اب بہت ہو گیا وفاقی حکومت اور نیپرا کو کے الیکٹرک کے خلاف کارروائی کرنی چاہیئے۔ عوام کو بلا تعطل بجلی کی فراہمی کو یقینی بنایا جائے۔ جماعت اسلامی نے کراچی کے عوام کی ترجمانی اس وقت بھی کی ہے جب کوئی پارٹی کے الیکٹرک کے خلاف بات کرنے پر تیار نہیں تھی۔ جماعت اسلامی آج بھی کراچی کے عوام کے ساتھ ہے، کے الیکٹرک نے عوام پر ظلم ڈھانا بند نہ کیا تو بھر پور احتجاج کیا جائے گا۔ #

مزید :

صفحہ آخر -