محسن وال: لڑکی کی بوری بند لاش برآمد، اراضی تنازعہ پر نوجوان قتل

محسن وال: لڑکی کی بوری بند لاش برآمد، اراضی تنازعہ پر نوجوان قتل

  

محسن وال + تونسہ شریف(نامہ نگار+ نمائند پاکستان) نواحی گاؤں 99پندرہ ایل میں 14روز قبل لا پتہ ہونے والی 12سالہ لڑکی کشف کی کھیتوں سے بوری بند لاش برآمد لڑکی کے والد محمد فاروق نے شبہ ظاہر کیا ہے کہ میری بیٹی کو بداخلاقی کا نشانہ بنانے کے بعد قتل کیا گیا تفصیل کے مطابق محسن وال کے نواحی گاؤ ں چک نمبر99پندرہ ایل سے 14روز قبل لا پتہ ہونے والی 12(بقیہ نمبر7صفحہ6پر)

سالہ کشف کی نعش گاؤں کے قریبی کھیتوں سے برآمدہوئی لڑکی کو قتل کر کے نعش کے ٹکڑے کر کے بوری میں بند کرتے ہوئے زمین کھود کر دفن کیا گیا تھا لڑکی کے اغواہ کا مقدمہ نمبری254/20تھانہ چھب کلاں میں پہلے سے درج ہے لڑکی اپنے گھر سے موبائل لوڈ کروانے گئی اور لا پتہ ہوگئی اطلاع ملنے پر ایس ایچ او تھانہ چھب کلاں ملک عون عباس بھاری نفری کے ہمراہ موقع پر پہنچ گئے اور نعش کو قبضہ میں لیکر پوسٹ مارٹم کیلئے تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال میاں چنوں منتقل کر دیا لڑکی کے والد محمد فاروق نے شبہ ظاہر کیا ہے کہ اس کی بیٹی کو زیادتی کا نشانہ بنانے کے بعد قتل کیا گیا ایس ایچ او تھانہ چھب کلاں ملک عون عباس نے رابطہ کرنے پر بتایا کہ وقوعہ کی تفتیش کر رہے ہیں اور چند مشکوک افراد کو حراست میں لیا ہے جلد اصل ملزمان کو ٹریس کر لیں گے۔بستی ہڈوار میں زمین کے تنازعہ پر نوجوان قتل کر فرار ہوگئے ہے ہڈوار شمالی کے رہائشی مضروب حاجی عبدالعزیز نے بتایا کہ وہ صبح کی نماز پڑھنے گیا تو مسجد میں ملزمان اللہ بخش, ظہور وغیرہ نے مل کر اس کے ساتھ لڑائی جھگڑا کیا تو نمازیوں نے جان بخشی کرائی تو ہم گھر چلے گئے تو کچھ دیر بعد ملزمان ظہور وغیرہ گھر پہنچ گئے آتے ہی ظہور نے اندھا دھند فائرنگ کر دی جس سے حسنین عرف ذوالفقار موقع پر دم توڑ گیا جبکہ اس کا باپ عزیز شدید زخمی ہوگیا ملزمان ہوائی فائرنگ کرتے ہوئے فرار ہو گئے

مزید :

ملتان صفحہ آخر -