فریضہ حج ادا کرنے کا ارادہ کرنے والے شرعی طور پر معذور ہیں لہذا۔۔۔سعودی حکومت کی جانب سے حج محدود کرنے کے بعد پاکستان سے بھی فتویٰ جاری ہو گیا

فریضہ حج ادا کرنے کا ارادہ کرنے والے شرعی طور پر معذور ہیں لہذا۔۔۔سعودی ...
 فریضہ حج ادا کرنے کا ارادہ کرنے والے شرعی طور پر معذور ہیں لہذا۔۔۔سعودی حکومت کی جانب سے حج محدود کرنے کے بعد پاکستان سے بھی فتویٰ جاری ہو گیا

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان علماء کونسل کے چیئرمین علامہ حافظ  طاہر محمود اشرفی نےسعودی حکومت کی طرف سے حج کے فریضہ کو منسوخ نہ کرنے کے فیصلے کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا ہےکہ  فریضہ حج ادا کرنے کا ارادہ کرنے والے شرعی طور پر معذور ہیں لہذا ان کے اجر و ثواب میں کوئی کمی نہیں آئے گی جبکہ نفلی حج کا ارادہ رکھنےو الے اپنے اخراجات مستحقین میں تقسیم کر دیں۔

نجی ٹی وی سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئےپاکستان علماء کونسل کے چیئرمین علامہ طاہر اشرفی نے کہا ہےکہ سعودی حکومت کی طرف سے حج کے فریضہ کو منسوخ نہ کرنے کے فیصلے کا خیر مقدم کرتے ہیں،ملک بھر کے علماء ومشائخ و مفتیان عظام سے مشاورت کے بعد جاری فتوی کے مطابق سعودی عرب کی حکومت کی طرف سے کرونا کی وبا کی وجہ سے حج کے عمل کو محدود کر دینا شرعاً جائز ہے اور شریعت اسلامیہ کے احکامات کے مطابق حج کی شرائط میں ا من ، صحت اور اخراجات کا ہونا ضروری ہے ، اس وقت کرونا کی وبا کی وجہ سے حجاج کرام کی صحت اور زندگی متاثر ہو سکتی ہے ، لہذا سعودی عرب کی حکومت کا فیصلہ شرعی طور پر درست ہے اور سعودی عرب کی حکومت نے حج کو منسوخ کرنے کی بجائے مقامی ، ملکی اور غیر ملکی افرادکیلئے اہتمام کر کے امت مسلمہ کے جذبات ، احساسات کی ترجمانی کی ہے جس پر خادم الحرمین الشریفین شاہ سلمان بن عبد العزیز اور ان کے ولی عہد امیر محمد بن سلمان کا شکریہ ادا کرتے ہیں۔

 شریعت اسلامیہ استطاعت رکھنے والوں کے لیےحج کا حکم دیتی ہے ،صحت ، مال اور امن استطاعت میں داخل ہے۔انہوں نے کہا کہ سعودی حکومت کی جانب سے حج کو محدود کرنے کے فیصلے کے بعد  فریضہ حج ادا کرنے کا ارادہ کرنے والے شرعی طور پر معذور ہیں لہذا ان کے اجر و ثواب میں کوئی کمی نہیں آئے گی جبکہ  نفلی حج کا ارادہ رکھنےو الے اپنے اخراجات موجودہ حالات کے تناظر میں مستحقین میں تقسیم کر دیں  ان شاء اللہ اللہ کریم اس کو اجر عظیم عطا فرمائیں گےاور اگر فرض حج کاارادہ کرنے والا بھی اپنی رقم مستحقین میں تقسیم کر دے تو اس کو اجر ضرور ملے گا لیکن فریضہ حج ادا نہ ہو گا۔ فتوی میں سعودی عرب میں موجود غیر ملکی اور سعودی حجاج کرام سے بھی اپیل کی گئی ہے کہ وہ سعودی عرب کے قوانین کی مکمل پابندی کریں ، بغیر اجازت حج جائز نہیں ہے لہذا موجودہ ایمرجنسی اور ہنگامی حالات میں سعودی عرب کی حکومت سے مکمل تعاون کیا جائے۔

واضح رہےکہ کورونا وائرس کےباعث سعودی حکومت  نےحج کےشرکاءکی تعداد محدودرکھنےکافیصلہ کیاہے۔

مزید :

قومی -